Source : Facebook

آرمی چیف نے 14دہشتگردوں کو نشان عبر ت بنا دیا
21 دسمبر 2018 (17:04) 2018-12-21

راولپنڈی: آرمی چیف نے پاک فوج اور قانون نافذ کرنے والے اداروں پر حملہ کرنے والے 14دہشتگردوں کو عبرت کا نشان بنا دیا ،آئی ایس پی آر کے مطابق تمام دہشتگردوں کو سزائے موت کی توثیق کر دی ہے ۔

دہشتگردوں کی کاروائیوں میں 16افراد جاں بحق اور 19افراد زخمی ہو ئے ، جن میں 13 فوجی اور 3 سویلین شامل ہیں، دہشتگردں نے مواصلات کے نظام، پولیس اسٹیشنز، تعلیمی اداروں کو بھی تباہ کیاتھا۔جمعہ کوپاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ آئی ایس پی آر کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے 14 خطرناک دہشت گردوں کی سزائے موت کی توثیق کردی، آرمی چیف نے 20 مزید دہشت گردوں کو دی گئی مختلف سزا ﺅ ں کی بھی توثیق کی ہے ۔

آئی ایس پی آر کے مطابق جن دہشت گردوں کو سزائے موت سنائی گئی ان میں محی الدین صالح ،گل زمین ،فضل ہادی،محمد وہاب، گل محمد، بشیر خان ، آفرین خان، برکت علی،محمداسلام،روح الامین،شت مند،باچا وزیر، محمد اور محمد اسماعیل شامل ہیں۔ دہشت گرد فورسز و قانون نافذ کرنے والے اداروں کے اہلکاروں پر حملے میں ملوث تھے جبکہ دہشت گردوں نے تعلیمی اداروں، پولیس اسٹیشن اور سرکاری املاک کو بھی نقصان پہنچایا تھا۔

آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ مذکورہ دہشت گردوں کی کارروائیوں میں 13 سیکیورٹی فورسز کے اہلکاروں سمیت 16 افراد شہید ہوئے تھے۔ دہشت گردی میں سیکیورٹی اہلکاروں سمیت 19 افراد زخمی بھی ہوئے تھے۔خیال رہے کہ 16 دسمبر کو بھی آرمی چیف نے دہشت گردانہ کارروائیوں میں ملوث 15 دہشت گردوں کی سزائے موت کی توثیق کی تھی۔

ڈی جی آئی ایس پی آر کے مطابق سزائے موت پانے والے مجرمان کا تعلق کالعدم تنظیم سے تھا، سزا پانے والے مجرمان میں پشاور کرسچن کالونی حملے اور تعلیمی اداروں کو نقصان پہنچانے کے ذمے دار دہشت گرد شامل تھے۔مذکورہ دہشت گردوں کی کارروائیوں میں مسلح افواج، شہریوں سمیت 34 افراد شہید اور 19 زخمی ہوئے تھے۔ دہشت گردوں سے اسلحہ و بارود بھی تحویل میں لیا گیا تھا۔


ای پیپر