Global pandemic, deadly virus, Pakistan, NCOC, lockdown,China
21 اپریل 2021 (17:31) 2021-04-21

بیجنگ :چین نےکورونا کو شکست دینے کیلئے ایسی ویکسین بھی بنا لی ہے جو کو انجیکٹ کیے بغیر منہ کے ذریعے استعمال کیا جا سکتا ہے ،چینی ماہرین نے منہ کے ذریعے ویکسین دینے کا ٹرائل شروع کرنے کا اعلان کر دیا ہے ۔

تفصیلات کے مطابق چین نے کرونا سے نمٹنے کیلئے ایک ایسی جدید ویکسین تیار کر لی ہے جس کو منہ کے ذریعے باآسانی استعمال کیا جا سکے گا ،چینی ماہرین کا کہنا ہے کہ منہ کے ذریعے استعمال کی جانے والی ویکسین انجیکٹ کی جانے والی ویکسین سے زیادہ تیزی سے اثر کرتی ہے ،اس کی بڑی وجہ بتاتے ہوئے سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ منہ کے ذریعے دینے سے ویکسین ایسے راستوں سے گزرتی ہے جہاں کورونا وائرس موجود ہوتا ہے ۔

 سی این بی سی کے مطابق یہ اعلان کینسینو بائیولاجکس کے شریک بانی اور چیف ایگزیکٹیو شیوفینگ یو نے کیا ہے،کینسینو نے اس ویکسین کی تیاری کے لیے بینجگ انسٹیٹوٹ آف بائیو ٹیکنالوجی سے اشتراک کیا ہے۔

کینسینو کی ایک تیار کردہ کووڈ ویکسین ایڈ 5 این کوو کو چین اور پاکستان سمیت متعدد ممالک میں استعمال کے لیے منظوری دی جا چکی ہے،کینسینو کے سی ای او نے بتایا کہ منہ کے ذریعے استعمال ہونے والی ویکسین اینٹی باڈی یا ٹی سیلز کو متحرک کرکے اضافی تحفظ فراہم کرسکے گی۔

ان کا کہنا تھا کہ اس طرح لوگوں کو زیادہ تحفظ مل سکے گا اور اسی وجہ سے ہم نے اس ویکسین کی تیاری کا فیصلہ کیا ہے۔


ای پیپر