شمالی کوریاکا ایٹمی میزائلوں کے مزید تجربات نہ کرنے کا اعلان
21 اپریل 2018 (15:27) 2018-04-21

پیانگ یانگ: شمالی کوریا نے ایٹمی اور میزائلوں کے مزید تجربات نہ کرنے کا اعلان کردیا،امریکہ کی طرف سے شمالی کوریا کے اعلان کا خیرمقدم کیا گیا ہے ۔
تفصیلات کے مطابق شمالی کوریا کے سربراہ کم جونگ ان نے مزید ایٹمی اور میزائلوں کے تجربات نہ کرنے کا اعلان کر تے ہوئے کہا کہ ہمیں مزید ایٹمی تجربات کی ضرورت نہیں جبکہ بین البراعظمی راکٹ ٹیسٹ کی بھی ضرورت نہیں۔سربراہ شمالی کوریا کم جونگ نے کہا کہ ان کی نیوکلیئر ٹیسٹ سائٹ نے اپنا مشن مکمل کرلیا ہے تاہم نیوکلیئر ٹیسٹ سائٹ بھی بند کرنے کا فیصلہ کرلیا جبکہ وہ مزید ایٹمی ہتھیار اور ٹیکنالوجی برآمد بھی نہیں کریں گے۔کم جونگ نے کہا کہ ایٹمی تجربات پر پابندی کی عالمی کوششوں کا حصہ بنیں گے جبکہ اس فیصلے کا مقصد ملکی اقتصادی ترقی اور خوشحالی پر توجہ دینا ہے۔


کم جونگ نے کہا کہ اب شمالی کوریا دنیا بھر میں ایٹمی تجربات ختم کرنے کی عالمی کوششوں کا حصہ بنے گا۔دوسری جانب شمالی کوریا کے اس اعلان کے ردعمل میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے ٹویٹ پیغام میں لکھا ہے کہ شمالی کوریا کا مزید ایٹمی اور میزائلوں کے تجربات نہ کرنے کا اعلان بڑی پیشرفت اور دنیا کے لیے خوشخبری ہے جبکہ ایٹمی ٹیسٹ سائٹ بند کرنے کا اعلان بھی خوش آئند ہے، کم جونگ ان سے ملاقات کا انتظار ہے ۔جنوبی کوریا کے صدر نے فیصلے کو بامعنی پیش رفت قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ فیصلے سے شمالی اور جنوبی کوریا ، جنوبی کوریا اور امریکا کے درمیان جلد ہونے والے مذاکرات کے لیے مثبت ماحول پیدا ہوگا۔جاپان نے اپنے ردعمل میں کہا ہے کہ شمالی کوریا پر دبائو کم کرنے کا ابھی وقت نہیں آیا۔


واضح رہے کہ امریکا کے نامزد وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے اس ماہ کے آغاز میں شمالی کوریا کا خفیہ دورہ کیا تھا اور ٹرمپ کے سفیر کی حیثیت سے شمالی کوریا کے سربراہ سے ملاقات کی تھی۔دوسری جانب شمالی اورجنوبی کوریاکے درمیان ہاٹ لائن رابطہ قائم ہوگیا ہے۔جنوبی کوریا کے بلیو ہائوس اور شمالی کوریا کے اسٹیٹ افیئرز کمیشن میں ہاٹ لائن رابطہ ہوا ہے۔


ای پیپر