ٹرمپ نے کویڈ 19 ویکسین منصوبے کیلئے مسلم سائنس دان کا انتخاب کر لیا
20 May 2020 (18:48) 2020-05-20

واشنگٹن: صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے مراکشی نژاد امریکی مسلمان مونسیف محمد سلوئی کو آپریشن وارپ اسپیڈ کے نام سے کویڈ19 ویکسین پروگرام کی سربراہی کرنے کے لئے چیف سائنس دان نامزد کیا ہے۔

جمعہ کی سہ پہر کو وائٹ ہاؤس کی نیوز بریفنگ میں اس تقرری کا اعلان کرتے ہوئے صدر ٹرمپ نے سلوئی کودنیا کے سب سے معزز مرد اور واقعتا ویکسین کی تیارکرنے والی ٹیم کی قیادت کے لائق قرار دیا،انہوں نے مزید کہاآپریشن وارپ اسپیڈ کے چیف سائنس دان ڈاکٹر مونسیف سلوی ہوں گے جو ایک عالمی شہرت یافتہ امیونولوجسٹ ہیں، جنہوں نے نجی شعبے میں اپنے وقت کے دوران 10 سالوں میں14 نئی ویکسین تیار کرنے میں مدد کی ہے۔

عرب نیوز کی ایک رپورٹ کے مطابق ڈاکٹر مونسیف سلوئی کو ایک ایسی ٹیم مدد فراہم کرے گی جس میں جلد از جلد مہلک کوروناوائرس کے لئے ایک ویکسین تیار کرنے کے لئے ریاستہائے متحدہ امریکہ کے آرمی میٹریئل کمانڈ کے کمانڈر آرمی جنرل گوسٹاوپ پرنا بھی شامل ہوں گے،ایسوسی ایٹڈ پریس نے اطلاع دی ہے کہ سلوئی آپریشن وارپ اسپیڈ پر اپنے کام کے لئے کوئی تنخواہ نہیں لیں گے۔

جب صدر ٹرمپ نے انہیں آپریشن وارپ اسپیڈ کی سربراہی کے لئے مقرر کیا تھا تو انہوں نے بائیوٹیک کمپنی موڈرنا کے بورڈ میں تھے گذشتہ ہفتے ہی استعفی دے دیا ،میرے لیے خدمت کرنے کا موقع عظیم اعزاز ہے،سلؤئی نے کہا میں نے حال ہی میں ایک کوروناوائرس ویکسین کے ساتھ کلینیکل ٹرائل سے ابتدائی ڈیٹا دیکھا ہے۔


ای پیپر