پنجاب میں پی ٹی آئی کے خلاف بغاوت کا آغاز
20 جنوری 2020 (21:25) 2020-01-20

اسلام آباد: پنجاب میں حکمرا ن جماعت تحریک انصا ف کے خلاف بغاوت کا آغاز ، 20ایم پی ایز نے پریشر گروپ بناتے ہوئے وزیراعلیٰ پنجاب کو کارکردگی بہتربنانے کے لئے فرور ی کے مہینے تک کاوقت دیدیا.

ذرائع کے مطابق  پریشر گروپ نے  قرآن پر حلف لے کر کسی بھی قسم کے حالات میں متحدرہنے کا عہد کرتے ہوئے کہاہے کہ مزید دس ایم پی ایز بھی ہمارے ساتھ آنے کو تیار ہیں اور ہمارے پاس اگلا آپشن حکومت کی تبدیلی ہے،صوبے کے دوسرے علاقوں میں بھی لاہور کے مقابلے کے ترقیاتی کام کرائے جائیں۔

 پاکستان تحریک انصاف کے ناراض گروپ کے ایم پی اے سردار شاہاب نے کہا کہ ہم بیس ایم پی ایز کے وفد نے قرآن پر حلف لیا ہے کہ کچھ بھی ہو جائے اکٹھے رہیں گے ،مزید دس ایم پی ایز بھی ہمارے ساتھ آنے کو تیار ہیں ، ہم نے فروری تک وزیراعلیٰ پنجاب کو وقت دیا ہے ، ہمارے پاس اگلا آپشن حکومت کی تبدیلی ہے ،کسی بھی حد تک جا سکتے ہیں ، نہ حکومت ہوگی نہ پارٹی ہوگی اور نہ ہی بیوروکریسی ہوگی ۔

انہوں نے کہا کہ ہمارے ساتھ دوسرے ایم پی ایز بھی رابطہ کر رہے ہیں ،صوبے کے دوسرے علاقوں میں بھی لاہور کے مقابلے کے ترقیاتی کام کرائے جائیں ،ہم سب پسماندہ علاقوں سے تعلق رکھتے ہیں ، ہم ایک دو نہیں بیس کے بیس جائیں گے ، ہمارے ساتھ پارٹی میں ایم پی ایز اور ایم این ایز کا جھگڑا ہوتا ہے لیکن جب ہم اکٹھے ہوں گے تو ہمارے کام وزیراعلیٰ اور حکومت کو کرنے پڑیں گے ، ہمارے ایک دو مکمل اجلاس ہوچکے ہیں ، ہماری پہلی میٹنگ غضنفر عباس نے کروائی تھی ۔


ای پیپر