Chaudhry Sarwar,governer punjab,inspiration,Sheikh Rashid
20 دسمبر 2020 (19:51) 2020-12-20

لاہور:گورنر پنجاب چوہدری محمد سرور نے کہا ہے کہ نوازشر یف کی واپسی بارے جو الہام شیخ رشید کو ہے مجھے نہیں ‘اپوزیشن میں اس پر بھی اتفاق نہیں پہلے لانگ مارچ کر نا یا استعفے دینے ہیں ‘‘امیدہے جنوری میں اپوزیشن اور حکومت میں مذاکرات کا آغاز ہوجائیگا اپوزیشن کے استعفوں اور لانگ مارچ کی نوبت نہیں آئیگی ۔

میڈیا سے گفتگو میں گورنرپنجاب چوہدری محمدسرور نے کہا کہ اس میں کوئی شک نہیں کہ اپوزیشن میں ابھی تک لانگ مارچ اوراستعفوں کے معاملے پر اتفاق نہیں اور ابھی تک اپوزیشن اس نتیجے پر نہیں پہنچی کہ پہلے استعفے دینے ہیں یا لانگ مارچ کر نا ہے مجھے توقع ہے کہ اپوزیشن جوش نہیں ہوش سے فیصلے کریگی اور مذاکرات کی میز پر آئیگی دنیا میں تمام مسائل کا حل آخر کار مذاکرات کے ذریعے ہی ممکن ہوتا ہے ۔

گور نر پنجاب نے کہا کہ وفاقی حکومت نواز شریف کی وطن واپسی سے متعلق تمام معاملات کو دیکھ رہی ہے اور جہاں تک وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید کا تعلق ہے تو نوازشر یف کی وطن واپسی کے بارے میں جو الہام شیخ رشید کو ہے مجھے نہیں ہے شیخ رشید وزیر داخلہ ہیں انکو یقینی طور پر حکومتی معاملات کا زیادہ علم ہوتا ہے۔

چوہدری محمدسرور نے کہا کہ میرے اور وزیر اعلی سردار عثمان بزدار سمیت تمام حکومت ایک پیج پر ہیں جہاں تک بیوروکریسی کا تعلق ہے تو وہ صوبے کے چیف ایگز یکٹو وزیر اعلی سردار عثمان بزدار کے ہی ماتحت ہے اپوزیشن سیاسی مفادات کیلئے سیاست کر رہی ہے عوام سے انکا کوئی لینا دینا نہیں احتساب کے معاملات کا حکومت سے کوئی تعلق نہیں وہ نیب اور دیگر ادارے کر رہے ہیں ہم آئین وقانون کی حکمرانی پر یقین رکھتے ہیں کسی قسم کے سیاسی انتقام کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا ۔


ای پیپر