بھارتی حکومت نے حریت رہنمائوں کی املاک کو ضبط کر لیا
19 نومبر 2019 (20:37) 2019-11-19

سری نگر:مقبوضہ جموں و کشمیر میں انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ نے آزادی پسند رہنما سید صلاح الدین اور دیگر حریت پسندوں کے خلاف فنڈنگ کے معاملے میں منسلک سات املاک کو ضبط کر لیا،انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ کا کہنا ہے کہ یہ املاک اننت ناگ، سوپور اور بانڈی پورہ میں واقع ہیں۔

تفصیلات کے مطابق اتھارٹی کے احکامات کی تصدیق کے بعد ای ڈی کے عہدیداروں نے ان علاقوں کا دورہ کیا اور نوٹس جاری کیے جس میں یہ اعلان کیا گیا کہ ایجنسی نے املا ک کو ضبط کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔میڈیاکے مطابق منی لانڈرنگ کی روک تھام سے متعلق قانون کے تحت ای ڈی نے ایک کشمیری تاجر محمد شفیع شاہ اورکے علاوہ چھ حریت پسندوں کی 13 املاک کو عارضی طور پر ضبط کرنے کے احکامات جاری کیے تھے۔

یہ کارروائی این آئی اے کی جانب سے ان کے خلاف دائر چارج شیٹ کی بنیاد پر کی گئی۔ انفورسمنٹ ڈائریکٹوریٹ کی رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ محمد شفیع شاہ اور دیگر ملزمان طالب لالی، مظفر احمد ڈار اور مشتاق احمد لون تہاڑ جیل میں بند ہیں۔


ای پیپر