مودی کے مقبوضہ کشمیر کے دورہ کیخلاف وادی میں مکمل ہڑتال

19 مئی 2018 (12:55)

سرینگر :بھارتی وزیراعظم نریندر مودی کے مقبوضہ کشمیر کے دورے کے خلاف وادی میں مکمل ہڑتال کی گئی ‘ اس موقع پر ریاست بھر میں سیکیورٹی ہائی الرٹ رہی جبکہ سرینگرمیں پولیس کی اضافی نفری تعینات ہے‘ جگہ جگہ رکاوٹیں کھڑی کر کے لوگوں اور گاڑیوں کی تلاشیوں کا سلسلہ جاری ہے


تفصیلات کے مطابق حریت رہنمائوں کی مودی کی آمد کیخلاف مکمل ہڑتال ‘سیاہ جھنڈے لہرانے اور لال چوک تک احتجاجی مارچ کرنے کی کال دی تھی‘حریت رہنما سید علی گیلانی‘ یاسین ملک اور دوسرے رہنمائوں کو گھروں اور تھانوں میں نظربند کر دیا گیا‘ مقبوضہ وادی ’’قاتل قاتل مودی قاتل‘‘ کے نعروں سے گونج اٹھی ۔حریت قیادت کی اپیل پر سرینگر لال چوک تک پرامن احتجاجی مارچ کیا جارہا ہے ۔ مودی کی آمد سے قبل ہی وادی میں سیکیورٹی ہائی الرٹ کردیا گیا، سرینگرمیں پولیس کی اضافی نفری تعینات ہے، جگہ جگہ رکاوٹیں کھڑی کر کے لوگوں اور گاڑیوں کی تلاشی لی گئی ۔


حریت رہنمائوں نے مودی کی آمد کے خلاف وادی میں مکمل ہڑتال ، گھروں اور دیگر مقامات پر سیاہ جھنڈے لہرانے اور لال چوک تک احتجاجی مارچ کرنے کی کال دی تھی ۔کٹھ پتلی انتظامیہ نے مارچ کی قیادت سے روکنے کے لیے حریت رہنما سید علی گیلانی، یاسین ملک اور دوسرے رہنماو?ں کو گھروں اور تھانوں میں نظربند کر دیا ہے۔

مزیدخبریں