کارروان علم فائونڈیشن کے زیر اہتمام “سکالرشپ ہولڈ رز کنونشن”2018کا انعقاد
19 مارچ 2018 (20:39)

کاروان علم فائونڈیشن کے زیر اہتمام لاہور میں “اسکالرشپ ہولڈرز کنونشن “کا انعقاد کیا گیا -جس میں علمی و ادبی شخصیات کی بڑی تعداد نے شرکت کی اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے کاروان علم فائونڈیشن کے بانی و سیکریٹری جنرل ڈاکٹر اعجاز حسین قریشی نے کہا کہ اعلیٰ تعلیمی اداروں کو چاہئے ریسرچ کوفروغ دیں اور طلباءکی کردار سازی پر بھی خصوصی توجہ دیں۔

انہو ں نے کہا کہ میں خود پانچویں کلاس سے پی ایچ ڈی تک وظیفوں پر پڑھا ہوں اس لئے میں اس درد کو بہتر طور پر محسوس کرسکتا ہوں

تقریب سے سینئر صحافیوں، ماہر تعلیم، سماجی شخصیات اوراساتذہ و طلبہ نے بھی خطاب کیا۔کنونشن کی صدارت سماجی کارکن و ماہر تعلیم احسان اللہ وقاص نے کی جبکہ تقریب کے مہمان خصوصی سینئر کالم نویس و اینکر جاوید چوہدری تھے

کنونشن میں چاروں صوبوں سمیت آزاد کشمیر اور گلگت و بلتستان سے چار سو سے زائد طلبہ،ان کے والدین اور تعلیمی اداروں کے سربراہان نے شرکت کی۔ کاروان علم فاﺅنڈیشن کے بانی و سیکرٹری جنرل ڈاکٹر اعجاز حسن قریشی نے طلباءو طالبات سے خطاب کرتے ہوئے مزید کہا کہ اس فاﺅنڈیشن کا آغاز دس ہزار روپے سر ہوا تھا محب وطن پاکستانیوں کے تعاون سے اب اس کے فنڈز کروڑوں روپے تک پہنچ چکے ہیں۔

خصوصی طور پر گلگت بلتستان سے آئی طالبہ نگہت محسود نے پرجوش تقریر کی اور پشتوزبان میں شاعری بھی سنائی۔ باہمت معذور طلبہ نے اپنی روداد سنائی کہ کاروان علم فاﺅنڈیشن کے تعاون سے نہ صرف انہوں نے اعلیٰ تعلیم حاصل کی بلکہ آج وہ اچھے عہدوں پر فائز ہیں اور ملک پاکستان کا سرمایہ بن چکے ہیں۔طلباءو طالبات نے اپنی اپنی علاقائی زبانوں میں شعرو شاعری بھی سنائی اور شرکاءسے خوب داد سمیٹی۔

یاد رہے کہ اس کنونشن میں ملک بھرکے 36میڈیکل کالجز 49جامعات اور دیگر تعلیمی اداروں سے طلبہ شریک ہوئے جس میں ایم بی بی ایس، ڈی فارمیسی ،ایم ایس سی ،ایم اے ،بی ایس انجینئرنگ ،بی ایس آنرز ،ایف ایس سی/ ایف اے کے طلبہ شریک ہوئے تھے۔

تقریب میں ایوب صابر اظہار، ندیم شفیق،خالد ارشاد صوفی، طیب اعجاز قریشی، ذوالفقار راحت، گل نوخیز اختر، شاہد نذیر چوہدری، نوید چوہدری، ندیم نظر،حبیب اکرم،افتخار مجاز،اسد اللہ غالب اور زابر سعید بدر نے بھی شرکت کی۔مہمانان گرامی، سینئرصحافیوں و کالم نگاروں کو کاروان علم فاﺅنڈیشن کی جانب سے تحائف و ایوارڈز بھی دیئے گئے جبکہ تقریب کے اختتام پر طلبہ کو بھی تعریفی سرٹیفیکٹس ارو تحائف دیئے گئے۔


ای پیپر