الیکشن کمیشن کے نامزد دو افسران پی ٹی آئی فارن فنڈنگ کمیٹی سے الگ
19 مارچ 2018 (19:37) 2018-03-19


اسلام آباد: الیکشن کمیشن کے نامزد دو افسران پی ٹی آئی کی غیر ملکی فنڈنگ کے معاملے پر بنائی گئی کمیٹی سے الگ ہو گئے، جس کے باعث کمیٹی فارن فنڈننگ کیس سے متعلق اپنے کام کا آغاز نا کر سکی، ستائیس مارچ کو یہ معاملہ پھر الیکشن کمیشن کے سامنے رکھا جائے گا،تحریک انصاف کی فارن فنڈنگ کی تحقیقات کے لئے نئی کمیٹی تشکیل دیئے جانے کا امکان ہے ۔


تفصیلات کے مطابق الیکشن کمیشن میں پی ٹی آئی غیر ملکی فنڈنگکے معاملے پر بنائی گئی کمیٹی سے الیکشن کمیشن کے نامزد دو افسران الگ ہو گئے۔ الیکشن کمیشن نے فریقین کو سننے کے لیے ڈی جی لاء کی سربراہی میں کمیٹی قائم کی تھی۔ کمیٹی فارن فنڈننگ کیس سے متعلق اپنے کام کا آغاز نا کر سکی۔ذرائع کے مطابق ستائیس مارچ کو یہ معاملہ پھر الیکشن کمیشن کے سامنے رکھا جائے گا۔ الیکشن کمیشن ستائیس مارچ کو ایک بار پھر سماعت کرے گی۔


ذرائع کے مطابق نئی کمیٹی تشکیل دئیے جانے کا امکان ہے۔پیر کو اکبر ایس بابر اور پی ٹی آئی اکاونٹس کے ذمہ دار کمیٹی کے سامنے پیش ہوئے ، تاہم الیکشن کمیشن کی کمیٹی نا مکمل ہونے کے باعث کارروائی آگے نا بڑھ سکی۔


ای پیپر