بدعنوان عناصر سے 150 ارب روپے وصول کئے : چیئر مین نیب
19 جنوری 2020 (20:13) 2020-01-19

اسلام آباد: چیئرمین نیب جسٹس (ر)جاوید اقبال نے کہا ہے کہ پاکستان اور چین سی پیک منصوبوں میں شفافیت یقینی بنانے کیلئے مل کرکام کر رہے ہیں، نیب نے 2019 میں بدعنوان عناصر سے 150 ارب روپے برآمد کرکے قومی خزانے میں جمع کرائے ۔

اپنے ایک بیان میں چیئرمین نیب نے کہا کہ قومی احتساب بیورو نے 2019 میں بدعنوان عناصر سے بلواسطہ اور بلا واسطہ طو ر پر 150 ارب روپے برآمد کرکے قومی خزانے میں جمع کرائے ہیں اور بدعنوان عناصر کے بلا امتیاز احتساب کیلئے بھرپور محنت کر رہا ہے۔ نیب کو 2018ء کے مقابلے میں 2019 ء میں مجموعی طور پر463845 شکایات موصول ہوئیں جن میں سے 450546 شکایات کو قانون کے مطابق نمٹا دیا گیاجبکہ اس وقت 13299 شکایات پر کاروائی کی ہے جن پر 2020ء میں قانون کے مطابق کارروائی کرے گا ۔

جسٹس (ر) جاوید اقبال نے کہا کہ سال 2019ء میں 9352 انکوائریوں کی منظوری دی جبکہ8493 انکوائریوں کومکمل کیا گیا، نیب کرپشن فری پاکستان پر یقین رکھتا ہے،پاکستان نے اپنی شاندار کامیابی کے تحت یو این سی اے سی میں مقام حاصل کیا،بھارت سمیت سارک ممالک میں ان وجوہات کی بناء پر نیب کی کارکردگی کی تعریف کی ، نیب کو سارک اینٹی کرپشن کا متفقہ طور پر چیئرمین منتخب کیا گیاجو کہ نیب کی کوششوں سے پاکستان کی بڑی کامیابی ہے۔

انہوں نے کہا کہ نیب نے سال 2019 میں 15056 شکایات پر جانچ پڑتال کی منظوری دی جن میں سے 14286شکایات کی جانچ پڑتال کو قانون کے مطابق مکمل کیا گیا جبکہ اس وقت 770 شکایات کی جانچ پڑتال پر قانون کے مطابق جاری ہیں جن پر 2020ء میں قانون کے مطابق کارروائی کرے گا ۔ سال 2019ء میں 9352 انکوائریوں کی منظوری دی جبکہ8493 انکوائریوں کومکمل کیا گیا۔ اس وقت 859 انکوائریوں پر قانون کے مطابق تحقیقات جارہی ہیں جن پر 2020ء میں قانون کے مطابق کارروائی کرے گا ۔


ای پیپر