Senate Elections, Corrupt politicians, votes, Khyber Pakhtunkhwa, Balochistan, other provinces, Shibli Faraz
19 فروری 2021 (15:50) 2021-02-19

اسلام آباد: وفاقی وزیر اطلاعات شبلی فراز نے کہا ہے کہ سینیٹ الیکشن کے موقع پر ایک منڈی بن جاتی ہے ، خیبرپختونخوا ، بلوچستان اور دیگر صوبوں میں بھی خرید و فروخت ہو رہی ہے۔ الیکشن سے قبل ہونے والی خریدو فروخت جمہوریت کو کمزور کرتی ہے۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے شبلی فراز نے کہا کہ عوام سینیٹ الیکشن میں شفافیت کے قائل ہیں اس لیے عوام کو معلوم ہونا چاہئے کہ کس کس نے ووٹ دیا ۔ انہوں نے کہا کہ سینیٹ میں وہ لوگ منتخب ہوں جنہیں کسی جماعت نے سلیکٹ کیا ہو۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ بلاول بھٹو بھی اب اوپن بیلٹ کی طرف مائل ہو رہے ہیں ، ہم سب کو مل کر ملک سے پیسے کی سیاست کو ختم کرنا ہے۔ پیسے کی سیاست کے خاتمے تک شفافیت نہیں آسکتی ، انہوں نے کہا کہ ہماری نیت اور کوشش ہے انتخابات کو شفاف بنایا جائے۔

شبلی فراز نے کہا کہ تحریک انصاف کے علاوہ کسی اور جماعت نے اوپن بیلٹ کیلئے اقدامات نہیں کئے ، انہوں نے کہا کہ میثاق جمہوریت میں پیپلز پارٹی اور ن لیگ نے معاہدہ کیا تھا کہ خفیہ بیلٹنگ ختم ہوگی۔

وزیر اطلاعات نے کہا کہ پیسے کی سیاست ختم ہونے تک قابل لوگ آگے نہیں آسکتے ، ہمارا مقصد الیکشن کمیشن کو مضبوط کرنا ہے۔ سینیٹ میں اسلام آباد سے حفیظ شیخ کامیاب ہوں گے۔ وفاقی وزیر نے کہا کہ الیکشن سے قبل ہونے والی خریدو فروخت جمہوریت کو کمزور کرتی ہے۔ ضمنی الیکشن میں آنے والے نتائج کو کھلے دل سے قبول کریں گے۔


ای پیپر