اسرائیلی وزیر اعظم کا ڈرون کا ٹکڑا دکھانے کی حرکت مزاحیہ تھی : ایران
19 فروری 2018 (22:53) 2018-02-19

میونخ : ایران نے اسرائیلی وزیراعظم نیتن یاہو کی میونخ سیکیورٹی کانفرنس میں مبینہ ایرانی ڈرون کا ٹکڑا لہرا نے کی حرکت کو مزاحیہ سرکس قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ اسرائیل خطے میں جارحیت کی پالیسی پر گامزن ہے، شام نے اسرائیلی طیارہ مار گرا کر صیہونی سازش کو بے نقاب کر دیا۔


جرمنی میں سیکورٹی کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے ایرانی وزیر خارجہ جواد ظریف کا کہنا ہے کہ اسرائیلی جارحیت کو پالیسی کے طور پر استعمال کررہا ہے۔اسرائیل اپنے پڑوسیوں کے خلاف انتقامی کارروائیوں کا ذمے دار ہے اور ہر روز شام اور ایران میں مداخلت کرتا ہے ۔


جواد ظریف نے کہا کہ میونخ سیکورٹی کانفرنس میں اسرائیلی وزیراعظم نے کارٹونِش سرکس سجایا جس کی اتنی بھی اہمیت نہیں کہ اس پر ردعمل دیا جائے ۔ اسرائیلی وزیراعظم نے اپنے پورے خطاب میں اصل مسئلے کو دبانے کی کوشش کی ، اسرائیلی وزیراعظم نتن یاہو نے اپنے خطاب میں ایران کو دنیا کا سب سے بڑا خطرہ قرار دیتے ہوئے ایران کے خلاف اقدامات کی دھمکی دی تھی ۔


ای پیپر