پرویز مشرف کی سزائے موت کے فیصلے کو کس نے سپریم کورٹ میں چیلنج کیا ،اہم خبر آگئی
19 دسمبر 2019 (17:16) 2019-12-19

کراچی :سابق صدر پرویزمشرف کی سزائے موت کا فیصلہ سپریم کورٹ کراچی رجسٹری میں چیلنج کردیا گیا۔

درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ پرویزمشرف پر سنگین غداری ایکٹ لاگو نہیں ہوتا،آرٹیکل 6 کو اٹھارہویں آئینی ترمیم میں تبدیل کیا گیا،پرویزمشرف نے 2007 میں ایمرجنسی لگائی آئین میں اٹھارہویں ترمیم 2010 میں کی گئی،پرویزمشرف نے اپنے دور اقتدار میں کوئی آئین و قانون شکنی نہیں کی، پرویزمشرف نے ریفرنڈم کے ذریعے اپنے اقتدار کو آئینی وقانونی حیثیت دی جس شخص پر آئین شکنی کااطلاق نہیں ہوتا اس پر آرٹیکل 6 لاگو نہیں ہوتا،استدعا کی گئی ہے کہ خصوصی عدالت سے کیس کا تمام ریکارڈ منگوایا جائے مقدمہ دائر کرنے کیلئے وزیر اعظم نے کابینہ سے منظوری نہیں لی ، شریک جرم افراد کو پر بھی مقدمہ دائر نہیں کیا گیا .

سنگین غداری کے مقدمہ کیلئے وفاقی کابینہ کی بھی منظوری ضروری تھی فوجداری مقدمہ چلانے کیلئے قانونی تقاضوں کو بھی پورا نہیں کیا گیا ملزم کا بیان ریکارڈ کیئے بغیر مقدمہ کا فیصلہ غیر قانونی ہے


ای پیپر