Demonstrations and vandalism will not make any difference to the Western world: PM
کیپشن:   فائل فوٹو
19 اپریل 2021 (12:37) 2021-04-19

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان نے کالعدم جماعت تحریک لبیک پاکستان (ٹی ایل پی) کی پرتشدد کارروائیوں پر کڑی تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ ملک میں مظاہرے اور توڑ پھوڑ کرنے سے مغربی دنیا کو کوئی فرق نہیں پڑے گا۔

وزیراعظم عمران خان نے یہ بات اسلام آباد میں مارگلہ ہائی وے کا سنگ بنیاد رکھنے کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔ ان کا کہنا تھا کہ بعض اوقات پاکستان کی چند سیاسی اور مذہبی جماعتوں کی جانب سے اسلام کا غلط طریقے سے استعمال کیا جاتا ہے جس کا نقصان ملک کو اٹھانا پڑتا ہے۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ میں ان پر سب واضح کر دینا چاہتا ہوں کہ ہم سب اپنے پیارے نبی حضرت محمد ﷺ سے محبت کرتے ہیں لیکن بعض سیاسی اور دینی جماعتوں کے رویے سے دوسروں کو نہیں بلکہ ہمیں نقصان پہنچتا ہے۔

انہوں نے سوال اٹھایا کہ جب کوئی ہمارے نبی ﷺ کی شان میں گستاخی کرتا ہے تو کیا اس کی تکلیف سے ہم نہیں گزرتے، کیسے کہا جا سکتا ہے کہ کسے کم تکلیف ہوئی اور کسے زیادہ، کیا کسی نے دوسروں کے دلوں کو چیر کر دیکھا ہے؟

وزیراعظم نے ایک بار پھر اپنا موقف دہراتے ہوئے کہا کہ ہمیں اس اہم ترین معاملے پر ایک عالمی مہم چلانے کی ضرورت ہے۔ ہم اپنے ملک میں توڑ پھوڑ، مظاہروں اور تشدد کا راستہ اپنا کر مغربی ملکوں کا نہیں بلکہ اپنا نقصان کرتے ہیں۔

ان کا کہنا تھا کہ حکومت اس معاملے سے غافل نہیں ہے، ہم دیگر مسلمان ممالک کے سربراہوں کیساتھ مل کی عالمی سطح کی ایک مہم چلانے کا پروگرام مرتب کر رہے ہیں تاکہ ایسی چیزیں جس سے مسلمانوں کے دلوں کو تکلیف پہنچتی ہے، اس کا تدارک کیا جا سکے۔


ای پیپر