ٹرمپ کے دماغ میں گوبر بھرا ہے :مائیک پومپیو
18 جون 2020 (20:35) 2020-06-18

واشنگٹن:امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو  نے امریکی صدر ٹرمپ کے بارے میں کہا  کہ ان کے دماغ میں گوبر بھرا ہے۔ اس بات کا انکشاف جان بولٹن نے اپنی کتاب میں کیا ہے جس نے امریکہ کے سیاسی حلقوں میں ہلچل مچا دی ہے۔

تفصیلات کے مطابق امریکی سابق مشیر امور قومی سلامتی جان بولٹن نے اپنی نئی کتاب میں انکشاف کیا ہے کہ امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے اپنے ہی صدر ٹرمپ کے بارے میں کہا کہ ان کے دماغ میں گوبر بھرا ہوا ہے، ٹرمپ نے الیکشن میں فتح یابی کیلئے چین سے مدد مانگی ہے، شی جن پھنگ کو کہا کہ ہماری مصنوعات خرید کر میری مدد کریں، ٹرمپ کے ساتھی پیٹھ پیچھے اسکی نقل اتارتے ہیں۔بین الاقوامی میڈیا کے مطابق جان بولٹن نے اپنی کتاب میں انکشاف کیا ہے کہ صدر ٹرمپ نے دوبارہ الیکشن میں فتح یقینی بنانے کے لیے چین سے مدد مانگی ہے۔

جان بولٹن نے اپنی کتاب میں لکھا کہ ٹرمپ کی شی جن پنگ سے ملاقات جون میں جاپان میں ہوئی تھی، اس موقع پر ٹرمپ نے باتوں کا موضوع بدلا، الیکشن کی بات کی اور چینی صدر سے کہا امریکی مصنوعات خریدیں۔ڈونلڈ ٹرمپ نے چینی صدر سے کہا کہ دوبارہ الیکشن میں فتح یقینی بنوائیں حالانکہ ٹرمپ نے یکسر مختلف بیان دیا تھا اور الزام لگایا تھا کہ چین انہیں ہرانا چاہتا ہے۔

مواخذے سے متعلق انہوں نے کہا کہ ٹرمپ کے مواخذے کی تحقیقات میں کئی اہم سوالوں پر بات ہونے سے رہ گئی ہے یہ انہوں نے مجرمانہ تحقیقات بھی رکوانے کی کوشش کی تھی۔اپنی نئی کتاب میں جان بولٹن نے شمالی کوریا کے سپریم لیڈر اور صدرٹرمپ کی ملاقات پربھی دلچسپ تبصرہ کیا۔انہوں نے کہا کہ اس دوران صدر ٹرمپ کے ساتھی پیٹ پیچھے ان کی نقلیں اتارتے تھے، وزیرخارجہ مائیک پامپیو نے پرچی پر لکھ کر کہا اس کے دماغ میں گوبر بھرا ہے۔


ای پیپر