جج ارشد ملک کی ویڈیو بنانے والوں کی تلاش میں چھاپے
18 جولائی 2019 (20:52) 2019-07-18

اسلام آباد:احتساب عدالت کے جج ارشد ملک کی مبینہ ویڈیو سکینڈل کیس کی تحقیقات کے حوالے سے ویڈیو اسکینڈل میں شامل افراد کو گرفتار کرنے کیلئے فیڈرل انوسٹی گیشن ایجنسینیملک کے مختلف شہروں میں چھاپے ما ر نے شروع کر د یئے، ایف آئی اے کی جانب سے مبینہ ویڈیو کے مرکزی کردار ناصر بٹ کے ڈیرے ڈھوک رتہ راولپنڈی میں چھاپہ مارا، چھاپے کے دوران ایف آئی اے کو ناصر بٹ نہیں ملا جبکہ اس کا چھوٹا بھائی ڈیرے سے فرار تھا۔

تفصیلات کے مطابق ایف آئی اے کی جانب سے احتساب عدالت کے جج ارشد ملک کی مبینہ ویڈیو میں شامل کرداروں کے خلاف چھاپے مارنے کا سلسلہ جاری ہے، جمعرات کو ایف آئی اے نے ڈھوک رتہ راولپنڈی میں مرکزی کردار ناصر بٹ کے ڈیرے میں چھاپ لیکن ڈیرے میں ناصر بٹ اور اس کے چھوٹے دونوں موجود نہیں تھے۔

 ایف آئی اے کی جانب سے ناصر بٹ کی بیرون ملک سفر کی تفصیلات بھی حاصل کرلی گئی ہیں، دوسری جانب ایف آئی اے نے ملتان ابدالی روڈ پر واقع دکان پر جمعرات کی رات 2بجے چھاپہ مارا اور دکان کے تالے توڑ کر اہم دستاویزات قبضے میں لے لیں، ایف آئی اے کے مطابق جج ارشد ملک کی مبینہ ویڈیو شامل کرنے والے میاں طارق کی دوکان پر چھاپہ مارا گیا تھا اور اہم دستاویزات کو تحویل میں لیا گیا ہے۔


ای پیپر