Image Source : Neo News Screenshoot

پی پی قیادت کا اہم اجلاس ، وفاقی حکومت کیخلاف اہم فیصلہ
18 جنوری 2019 (19:56) 2019-01-18

کراچی: پاکستان پیپلز پارٹی نے حکومت کو ٹف ٹائم دینے کے لئے عوامی اور پارلیمانی فورم استعمال کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔

جمعے کے روز بلاول ہاوس کراچی میں چیئرمین پاکستان پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری اور شریک چیئرمین آصف علی زرداری کی زیر صدارت اہم اجلاس ہوا‘جس میں پی پی قیادت نے وفاقی حکومت کو ٹف ٹائم دینے کے لئے عوامی اور پارلیمانی فورم استعمال کرنے کا فیصلہ کر لیا ۔ اجلاس کے بعد سابق صدر آصف زرداری نے کہا کہ اس طرح سرکار نہیں چل سکتی‘حکومتی ہتھکنڈوں کےخلاف عوامی‘پارلیمانی فورم استعمال کریں گے۔

آصف زرداری نے کہا کہ گرتی ہوئی دیوارکوکوئی اور دھکا نہیں دیتا‘وہ خود ہی گر جاتی ہے‘سازشیں کرنے والوں کو منطقی انجام تک پہنچائیں گے۔ان کا کہنا تھا کہ میرا اوربلاول کا نام ای سی ایل میں شامل کرنے والوں کوبتانا چاہتا ہوں‘ اس طرح کے مسائل پہلے بھی برداشت کر چکے ہیں۔اس موقع پر بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ پیپلز پارٹی کی قیادت کو کچھ بھی ہوا‘ تو ذمہ دار حکومت ہوگی۔انھوں نے عوامی اور پارلیمانی فورم کے استعمال کا عندیہ دیتے ہوئے وزیر اعظم عمران خان کو تنقید کا نشانہ بنایا۔


ای پیپر