Source : Facebook

نواز شریف کے گارڈ زکا کیمرامین پر تشدد ،وزیر اعظم کا ایکشن
18 دسمبر 2018 (18:27) 2018-12-18

اسلام آباد:سابق وزیر اعظم کے گارڈ کا صحافی پر تشدد کے بعد صحافی برادری نے شدید احتجاج کیا ،جس کے بعد نواز شریف نے خود بھی گارڈ کے اس رویے کی شدید مذمت کی ،اب وزیر اعظم پاکستان عمران خان نے صحافی پر تشدد کا خود بھی نوٹس لے لیا ،انہوں نے کہا کہ حکومت میڈیا ورکرز کا تحفظ یقینی بنائے گی ۔

عمران خان نے صحافی پر تشدد کیخلاف سخت ایکشن لیتے ہوئے شہر یار آفریدی اور معاون خصوصی افتخار درانی کو معاملات دیکھنے کی ہدایت کر دی ،ان کا کہنا تھا صحافیوں پر تشدد کسی صورت قبول نہیں کیا جائیگا ،حکومت میڈیا ورکرز کا تحفظ یقینی بنائے گی ۔

عمران خان کے معاون خصوصی نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ نواز شریف نے کیمرا مین پر تشدد کے معاملے پر ایک دفعہ پھر جھوٹ کا سہار ا لیا ،انہوں نے اس سارے معاملے کو اب خود وزیر اعظم عمران خان دیکھ رہے ہیں ،ان کی ہدایت پر ہی کیمرا مین کی عیادت کیلئے ہسپتال آیا ہو ں ،افتخار درانی کا کہنا تھا کہ اس طرح کے واقعات نہیں ہونے چاہیے ،قومی اسمبلی میں اتنے زیادہ گارڈز کی ضرورت نہیں تھی ۔

واضح رہے سپیکر قومی اسمبلی نے صحافی پر تشدد کیخلاف سخت ایکشن لیتے ہوئے پہلے ہی ممبران اسمبلی کے سکیورٹی گارڈ ز کی پارلیمنٹ کے احاطہ میں داخلہ پر پابندی لگادی ہے ۔


ای پیپر