Huawei, 6G, 50 times, faster speed, 5G, China
18 اپریل 2021 (10:40) 2021-04-18

بیجنگ: چینی ٹیلی کام کمپنی ہواوے نے 6 جی نیٹ ورک لانچ کرنے کا منصوبہ بنا لیا ہے ۔

چینی میڈیا کے مطابق 'ہواوے' کمپنی کا کہنا ہے کہ وہ دو ہزار تیس تک 6 جی نیٹ ورک کو لانچ کرنے کا ارادہ رکھتی ہے ۔ 6 جی نیٹ ورک فائیو جی سے 50 گنا تیز ہوگا ۔ اس نیٹ ورک کے ذریعے ایک سکینڈ میں ایک ہزار گیگا بِٹس ڈیٹا ٹرانسفر ہوسکے گا ۔

واضح رہے کہ اس سے قبل معروف ٹیکنالوجی کمپنی ہواوے نے اپنا آپریٹنگ سسٹم ہارمونی کو جون 2021ء سے سمارٹ فونز کا حصہ بنانے کا اعلان کیا تھا جس کے بعد متعدد ڈیوائسز ہارمونی او ایس 2.0 پر منتقل کر دی جائی گی ۔

ہواوے کو مئی 2019 میں امریکی پابندیوں کے نتیجے میں گوگل ایپس اور سروسز تک رسائی حاصل نہیں رہی تھی جس کے بعد اس نے اپنا آپریٹنگ سسٹم ہارمونی او ایس متعارف کرایا تھا مگر اسے ابھی تک سمارٹ فونز کا حصہ نہیں بنایا گیا تھا لیکن صارفین کیلئے خوشخبری ہے کہ ہواوے اپنے فونز میں اینڈرائیڈ کی بجائے ہارمونی او ایس کو جگہ دینے کیلئے بالکل تیار ہے ۔

ہواوے کے کنزیومر بزنس گروپ کے صدر ڈاکٹر وانگ چینگ لو نے چین میں ایک ایونٹ میں شرکت کے موقع پر گفتگو کرتے ہوئے تصدیق کی کہ جون 2021 سے متعدد ڈیوائسز ہارمونی او ایس 2.0 پر منتقل ہوجائیں گی ۔ انہوں نے توقع ظاہر کی کہ 2021 کے آخر تک 30 کروڑ سمارٹ فونز ، ٹیبلیٹس اور دیگر انٹرنیٹ آف تھنگز ڈیوائسز میں ہارمونی او ایس موجود ہوگا ۔


ای پیپر