India Corona Virus,Global pandemic, deadly virus, Pakistan, NCOC, lockdown
17 May 2021 (17:17) 2021-05-17

اسلام آباد :وزیر اعظم عمران خان کے مشیر صحت ڈاکٹر فیصل سلطان نے کہا کہ بھارت میں تباہی پھیلانے والے کورونا وائرس کی قسم کا کوئی کیس پاکستان میں سامنے نہیں آیا ،اس سلسلے میں تھائی لینڈ کا دعویٰ بالکل غلط ہے اور تھائی لینڈ حکومت نے ابھی تک ایسے کوئی ثبوت فراہم نہیں کیے جس سے یہ بات واضح ہو سکے کہ پاکستان سے تھائی لینڈ سفر کرنے والے مسافر میں بھارتی کورونا وائر س کی قسم موجود تھی ۔

تفصیلات کے مطابق مشیر صحت ڈاکٹر فیصل سلطان کا کہنا تھا کہ بھارت میں پھیلی ٹرپل میوٹینٹ کورونا کے پاکستان پہنچنے کا ثبوت نہیں ملا،اپنے بیان میں انہوں نے کہا کہ پاکستان آنے والے مسافروں کی سخت نگرانی کر رہے ہیں، فضائی راستے سے پاکستان آنے والے مسافروں کی تعداد اسی فیصد تک کم کردی ہے،بھارت سمیت دنیا کے دیگر ممالک میں عالمی وبا کی تیسری لہر میں شدت کی وجہ سے پاکستان نے بھی دیگر ممالک سے آنے والے مسافروں پر کڑی نگرانی شروع کر دی ہے ۔

ڈاکٹر فیصل سلطان نے بتایا کہ بیرون ملک سے سفر کرکے پاکستان آنے والوں کا مسافروں کا پہلا کورونا ٹیسٹ کروایا جاتا ہے اور اگر پازیٹو آجائے تو انہیں پہلے قرنطینہ کیا جا تا ہے ،تمام مسافروں کا پی سی آر ٹیسٹ لازمی قرار دیا جا چکا ہے ۔

دوسری طرف ڈی جی ہیلتھ ڈاکٹر رانا صفدر نے کہاکہ پاکستان میں لگائی جانے والی ایسٹرازینیکا ویکسین انڈین ویرئینٹ کے خلاف بھی موثر ہے، پاکستان میں ابھی تک انڈین ویرئینٹ پہنچنے کے کوئی شواہد نہیں ہیں،اگر چہ انڈین ویرئینٹ دنیا کے پچاس ممالک میں پھیل چکا ہے۔


ای پیپر