شہباز شریف کے اثاثے منجمد کرنے کا حکم آگیا
17 جولائی 2019 (21:26) 2019-07-17

اسلام آباد :نیب ایگزیکٹو بورڈ نے شہباز شریف پر بجلیاں گرا دیں ، شہباز شریف کی 32سے زاید منقولہ جائیدادیں منسوخ کرنے کا اعلان کر دیا گیا ۔

تفصیلات کے مطابق نیب ایگزیکٹو بورڈ نے شہباز شریف کے اثاثے منجمد کرنے کی منظوری دیدی ،منظور ی کے بعد ملک بھرمیں شہباز شریف کے اثاثے منجمد کرنے کا عمل شروع ہو گیا ۔

نیب کی طرف سے شہباز شریف کی 3جائیدادیں منجمد کرنے کیلئے ڈی سی ہر ی پور کو ہدایات جا ری کر دیں ،نیب کی جانب سے ڈی جی ایکسائز کو شہباز شریف کی دونوں گاڑیو ں کو بھی قبضے میں کرنے کا حکم آگیا ،شہبا زشریف کی منقولہ 32جائیدادیں منسوخ کا بھی کہا گیا ،نیب کی طرف سے خط جار ی کر دیا گیا ۔

نیب لاہور نے مختلف اداروں کو خط لکھ کر ہدایات دی ہیں جس کے مطابق ماڈل ٹاو¿ن لاہور میں شہباز شریف کی 2 رہائش گاہیں 87 ایچ اور 96 ایچ ہیں اور یہ دونوں رہائش گاہیں شہباز شریف کی اہلیہ نصرت شہباز کے نام ہیں،نیب خط کے مطابق ڈونگا گلی میں 9 کنال کا مکان بھی ان کی اہلیہ بیگم نصرت شہباز کے نام ہے۔

نیب خط میں بتایا گیا ہے کہ ہری پور میں شہبازشریف کا ایک پلاٹ، کاٹیج اور وِلا ان کی دوسری بیوی تہمینہ درانی کے نام ہے جب کہ ڈیفنس لاہور کے فیز 5 میں شہباز شریف کے 2 مکان بھی تہمینہ درانی کے نام ہیں،نیب خط میں کہا گیا ہے کہ جوہر ٹاو¿ن لاہور میں 9 پلاٹ شہباز شریف کے صاحبزادے حمزہ شہباز کے نام ہیں،نیب کے خط میں شہباز شریف کے نام 2 بڑی گاڑیاں بھی منجمد کرنے کا حکم دیا گیا ہے۔


ای پیپر