TLP,Khadam Rizvi,Saad Rizvi,TLP Ban in Pakistan
17 اپریل 2021 (22:14) 2021-04-17

لاہور :کالعدم تحریک لبیک کے سربراہ سعد رضوی کا نام محکمہ داخلہ پنجاب نے فورتھ شیڈول میں شامل کر دیا جس کے بعد ان کے اثاثے منجمد ،شناختی کارڈ بھی بلاک کر دیا گیا ہے ۔

تفصیلات کے مطابق شیڈول فور میں نام شامل ہونے کے بعد مرحوم علامہ خادم حسین رضوی کے بیٹے سعد رضوی کی جائیداد منجمد اور شناختی کارڈ بلاک کردیاگیا ، سعد رضوی نہ کوئی بینک اکاؤنٹ استعمال کرسکیں گے نہ جائيدادکی خرید و فروخت کرسکیں گے۔

محکمہ داخلہ پنجاب کی جانب سے کالعدم ٹی ایل پی کے سربراہ سعد رضوی کا نام فورتھ شیڈول میں شامل کرنے کا نوٹیفکیشن جاری کیا گیا،نیشنل کاؤنٹر ٹیررازم اتھارٹی (نیکٹا) نے بھی تحریک لبیک کا نام کالعدم جماعتوں کی فہرست میں شامل کرلیا۔ 

واضح رہے چند رو زقبل ہی شیخ رشید نے یہ خبر دی تھی جس میں اس بات کا اشارہ کیا گیا تھا کہ تحریک لبیک پاکستان کو کالعدم قرار دینے کے ساتھ ان کے اثاثوں کو بھی منجمد کر دیا جائیگا ،آج محکمہ داخلہ نے کالعدم تحریک لبیک پاکستان کے سبراہ سعد رضوی کے تمام اثاثہ جات کو منجمدکرنے کا اعلان کردیا ۔

وزارت داخلہ کی طرف سے تحریک لبیک پاکستان کو کالعدم قرار دیتے وقت یہ موقف اختیار کیا گیا کہ ٹی ایل پی ملک میں دہشت گردی اور دوسرے گھناؤنے جرائم میں ملوث ہے۔

 انسداد دہشت گردی ایکٹ 1997کے تحت تحریک لبیک پاکستان کو کالعدم قرار دیا گیا تھا ،اب وزات داخلہ نے پارٹی کے سربراہ کے تمام اثاثے جات کو بھی منجمد کرنے اعلان کر دیا ہے .

دوسری طرف وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید کاکہنا ہے کہ ایسا قانون لا رہے ہیں جس کے تحت کالعدم تحریک لبیک کے ممبر ز اسمبلیوں میں نہیں رہ سکیں گے ، قانون کے تحت نہ یہ الیکشن میں حصہ لیں گے نہ کسی پارٹی میں شامل ہوسکیں گے۔

شیخ رشید نے انکشاف کیا کہ کالعدم تحریک لبیک پاکستان نے پورے ملک کو سیل کرنے کا پلان بنایا ہوا تھا،انہوں نے کہا نے کہا کہ تحریک لبیک پارٹی 2 سال پہلے 2017 میں بنی ہے۔ آج تک خادم حسین رضوی اور سعد رضوی سے ملاقات نہیں ہوئی۔ میں کبھی بھی تحریک لبیک کے دھرنے میں نہیں گیا۔


ای پیپر