Global pandemic, deadly virus, Pakistan, NCOC, lockdown,CanSino
17 اپریل 2021 (16:41) 2021-04-17

کراچی :عالمی وبا کی تیسری لہر سے جہاں پوری دنیا میںہلچل مچی ہوئی ہے وہیں اس وبا کی وجہ سے پاکستانی بھی خاصے پریشان ہیں کہ آخر کب ہر پاکستانی کو یہ ویکیسن میسر ہوگی ،اس سلسلے میں پاکستانیوں کیلئے اچھی خبر یہ ہے کہ کین سائینو ویکسین کولڈ اسٹوریج میں رکھ دی گئی۔

نجی کمپنی کا دعویٰ ہے کہ ویکیسن پاکستان میں پہنچ چکی ہے جسے فی الوقت لوڈ سٹویج میں رکھ دیا گیا ہے ،ڈریپ کے مطابق  جب تک نیشنل بائیولوجیکل لیب کی جانب سے سرٹیفکیٹ جاری نہیں ہوگا ویکسین کو بیچنے کی اجازت نہیں ہوگی۔

دوسری طرف کراچی کی ایک نجی کمپنی نے دعوی کیا ہے کہ ڈریپ کے بروقت اقدامات نہ کرنے کے باعث کین سائینو ویکسین کولڈسٹوریج میں رکھی گئی ہے۔ذرائع کے مطابق کین سائینو ویکسین کے 10ہزار ڈوز نجی کمپنی کی جانب سے چین سے درآمد کیے گئےہیں ۔کمپنی ذرائع کے مطابق کراچی کی نجی کمپنی نے ملک کے 3 ہسپتالوں سے معاہدہ کیا ہوا ہے۔

کمپنی نے دعوی کیا ہے کہ کاغذی کارروائی میں تاخیر کے باعث ویکسین کو کولڈسٹوریج میں رکھا ہوا ہے۔دوسری جانب ڈریپ ذرائع کا کہنا ہے کہ کاغذی کاروائی جلد مکمل کرلی جائے گی۔

ڈریپ ذرائع نے بتایا کہ ویکسین کے نمونے بائیولوجیکل ویری فکیشن کے لیے نیشنل بائیولوجیکل لیب بھجوادیے گئے ہیں۔انہوں نے کہا کہ جب تک نیشنل بائیولوجیکل لیب کی جانب سے سرٹیفکیٹ جاری نہیں ہوگا ویکسین کو بیچنے کی اجازت نہیں ہوگی۔ڈریپ ذرائع کا مزید کہنا تھا کہ ڈریپ کی اجازت قیمت اور نیشنل بائیولوجیکل لیب کے سرٹیفکیٹ سے مشروط ہے۔


ای پیپر