Shah Mehmood Qureshi gave good news
16 دسمبر 2020 (22:01) 2020-12-16

اسلام آباد :وفاقی وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے نیوز کانفرنس سے بات چیت کرتے ہوئے کہا افغان طالبان وفد کے ساتھ آج تیسری نشست ہوئی ہے ،افغان طالبان وفد کی قیادت ملاعبدالغنی برادر کر رہے تھے،ان کا کہنا تھا پرامن اور مستحکم افغانستان کیلئے مذاکرات ہی مسئلے کا واحد حل ہیں۔

تفصیلات کے مطابق افغان طالبان وفد سے ملاقات کے بعد شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا افغان طالبان وفد کیساتھ مذاکرات کا اگلا مرحلہ 5 جنوری 2021 کو ہوگا،ان کا کہنا تھا افغانستان کے مستقل امن کیلئے پاکستان کے کردار کو تسلیم کیا جاتا ہے، آج کی نشست میں پاکستان نےاپنانقطہ نظرپیش کیا،پرامن اور مستحکم افغانستان کیلئے مذاکرات ہی مسئلے کا واحد حل ہیں۔

شاہ محمودقریشی کا کہنا تھا 4 دہائیوں سے افغانستان میں انتشار سے پاکستان کا بھی نقصان  ہوا ہے،طالبان وفد کیساتھ نشست میں پاکستان نے اپنا نقطہ نظر پیش کیا ،پرامن اور مستحکم افغانستان کیلئے مذاکرات ہی مسئلے کا واحد حل ہیں،مستحکم افغانستان کیلئے عالمی برادری کو بھی کردار ادا کرنا ہوگا،انہوں نے کہا خواہش ہے تشدد میں کمی سیز فائر کی طرف بڑھے،مہاجرین کی واپسی کیلئے عالمی برادری کو کردار ادا کرنا ہوگا،اس موقع پر شاہ محمودقریشی نے کہا کہ افغان طالبان نے امن عمل میں پاکستان کے کردار پر پاکستان کا شکریہ ادا کیا ۔

انہوں نے کہا طالبان وفد اس بات پر متفق ہے کہ افغانستان میں مزید لڑائی نہیں ہونی چاہیے ،شاہ محمود قریشی نے کہا افغان طالبان کا وفد وزیر اعظم عمران خان سے بھی ملاقات کرے گا ۔


ای پیپر