فوٹوبشکریہ فیس بک

اوورسیز ووٹ 6 حلقوں میں فیصلہ کن کردار ادا کرسکتے ہیں
15 اکتوبر 2018 (10:50) 2018-10-15

اسلام آباد: ذرا ٹھہریے، پکچر ابھی باقی ہے۔ ملکی تاریخ میں پہلی بار کاسٹ کیے گئے اوورسیز ووٹ 6 حلقوں میں فیصلہ کن کردار ادا کرسکتے ہیں۔

قومی اسمبلی کی ایک، خیبرپختونخوا اسمبلی کی 3 اور پنجاب اسمبلی کی دو نشستوں پر جیت کا مارجن بہت کم ہے۔ اگر اوورسیز ووٹرز کے ووٹ شامل کرلیے جائیں تو نتائج تبدیل ہوسکتے ہیں۔

این اے 60 راولپنڈی میں جیت کا مارجن صرف 647 ووٹوں کا ہے، اس حلقے سے شیخ رشید کے بھتیجے راشد شفیق جیتے ہیں۔ خیبرپختونخوا اسمبلی کی نشست پی کے 7 سوات میں جیت کا مارجن 671 ووٹ کا ہے۔ یہاں سے اے این پی کے وقار احمد خان کو برتری ملی۔ پی کے 3 سوات میں جیت کا مارجن 913 ووٹوں کا ہے۔ اس حلقے سے مسلم لیگ (ن) کے سردار خان کامیاب ہوئے۔ پی کے 53 مردان میں جیت کا مارجن صرف 61 ووٹوں کا ہے۔ یہاں تحریک انصاف کے محمد عبدالسلام کو کامیابی ملی ہے۔

پنجاب اسمبلی کی نشست پی پی 27 جہلم میں جیت کا مارجن 656 ووٹ ہے اس حلقے میں مسلم لیگ (ن) کے ناصر محمود فتح یاب ہوئے۔ اسی طرح پی پی 3 اٹک میں جیت کا مارجن 227 ووٹوں کا ہے، اس حلقے میں مسلم لیگ ن کے افتخار احمد خان کو کامیابی ملی۔

الیکشن کمیشن حکام کے مطابق 6233 اوورسیز پاکستانیوں نے ووٹ کاسٹ کیے۔ اب الیکشن کمیشن اور نادرا حکام سے میٹنگ میں فیصلہ ہوگا کہ اوورسیز پاکستانیوں کے ووٹ حتمی نتائج میں شامل ہوں گے یا نہیں، کمیشن پہلے تسلی کرے گا کہ ووٹنگ کا عمل کیسا رہا ہے۔


ای پیپر