Pakistan, Meteorological Department, cold winds, Lahore, rain
کیپشن:   فائل فوٹو
15 نومبر 2020 (13:38) 2020-11-15

لاہور کے مختلف علاقوں میں تیز بارش، آسمان پر گہرے بادل چھا گئے، ٹھنڈی ہوائیں چلنے سے سردی کی شدت میں اضافہ ہو گیا۔

تفصیلات کے مطابق ہربنس پورہ ، والٹن روڈ، کوٹ لکھپت، سمن آباد، گلشن راوی، مزنگ اور دیگر علاقوں میں بارش ہوئی۔ محکمہ موسمیات کا کہنا ہے کہ چوبیس گھنٹوں کے دوران بوندا باندی کا سلسلہ وقفے وقفے سے جاری رہے گا۔

توقع کی جا رہی ہے کہ آج کی بارش سے سموگ سے کافی حد تک چھٹکارہ مل جائے گا اور ائیر کوالٹی انڈیکس کم ہو کر 281 رہ جائے گا۔ پنجاب کے دارلحکومت لاہور میں ائیر کوالٹی بہت خراب ہو گیا تھا اور سموگ کی وجہ سے شہریوں کو مختلف بیماریوں کا سامنا کرنا پڑ رہا تھا۔

ادھر گلگت بلتستان میں ٹھنڈے موسم میں سیاسی ماحول گرم ہے۔ دیامر کے علاقے تانگیر میں رات سے برفباری کا سلسلہ جاری ہے، غذر کے پہاڑ بھی برف سے ڈھک گئے ، یخ بستہ ہواؤں میں ووٹرز کا جوش کم نہ ہوا۔

اس کے علاوہ استور ہیڈکوارٹر میں برفباری کے باعث ووٹرز کو پریشانی کا سامنا ہے۔ استور کے بالائی علاقوں میں شدید برفباری جاری ہے۔ بابوسر میں بھی برفباری اور بارش کا سلسلہ وقفے وقفے سے جاری ہے۔

خیال رہے کہ لاہور میں گزشتہ کئی ماہ سے بارش نہیں ہوئی تھی اور محکمہ موسمیات نے ہفتہ اور اتوار کو بارش کی پیش گوئی کی تھی۔ اس بارش سے ماحول پر اچھا اثر پڑے گا۔

ادھرائیر کوالٹی انڈیکس کی جانب سے جاری کردہ رپورٹ کے مطابق نئی دہلی آلودہ ترین شہر میں پہلے نمبر پر آگیا۔ یہاں آلودہ زرات کی مقدار 552 پرٹیکیولیٹ میٹرز ہو گئی ہے۔ دہلی میں آلودہ فضا سے شہریوں کو سانس لینے میں دشواری کا سامنا ہے۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ لوگ ایسی حالت میں ماسک کا استعمال لازمی کریں ورنہ صحت کے حوالے سے کئی مسائل کا سامنا کرنا پڑ سکتا ہے۔


ای پیپر