مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق پامال ہو رہے ہیں: شاہ محمود قریشی
15 نومبر 2019 (20:42) 2019-11-15

اسلام آباد :وزیر خارجہ شاہ محمودقریشی نے کہا ہے کہ مقبوضہ کشمیرمیں انسانی حقوق فی الفور بحال کئے جائیں اور پبلک سیفٹی ایکٹ کا کالا قانون ختم کیا جائے، بھارت خفت مٹانے کے لئے فالس فلیگ آپریشن سمیت کچھ بھی کرسکتا۔

تفصیلات کے مطابق وزیر خارجہ شاہ محمودقریشی نے مقبوضہ کشمیرکی تازہ ترین صورتحال کے حوالے سے بیان میں کہا کہ بھارت اس وقت مختلف قسم کی منصوبہ بندیاں کر رہا ہے اور کرتا رہے گا، بھارت خفت مٹانے کے لئے فالس فلیگ آپریشن سمیت کچھ بھی کرسکتا۔امریکی کانگریس کیٹام لنٹاس کمیشن نے کشمیر پر ایک سماعت کی، سماعت میں عالمی تنظیموں کے مندوبین، ماہرین، تجزیہ نگار موجود تھے، سماعت میں واضح کہا گیا بھارت میں ہندونیشنلزم تیزی سے بڑھ رہا ہے۔

وزیر خارجہ نے کہا مقبوضہ کشمیرمیں ذرائع مواصلات سمیت دیگربندشیں بدستورجاری ہیں، انسانی حقوق کو پامال کیا جارہا ہے، نقل وحرکت، مذہبی آزادی، آزادی اظہار رائے سب پر قدغن لگائی گئی، کمیشن کا کہنا ہے بھارت میں اقلیتوں کے ساتھ نارواسلوک برتاجارہاہے اور جبر و تشدد کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔ کمیشن نے بابری مسجد پر بھارتی سپریم کورٹ کے فیصلے پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا آسام میں 2ملین لوگوں کو خارج قرار دے کر اسٹیٹ لیس کر دیا گیا، بھارت یواین قراردادوں سے رو گردانی کر رہا ہے۔


ای پیپر