پانامہ جے آئی ٹی سے متعلق چوہدری نثار کے اہم انکشافات
کیپشن:   Source : Yahoo
15 اگست 2018 (22:35) 2018-08-15

اسلام آباد:مسلم لیگ (ن) کے ناراض رہنما چوہدری نثار نے کہا ہے کہ میرا یا وزارت داخلہ کا فوجی افسران کی شمو لیت سے متعلق کوئی عمل دخل نہ تھا‘ جے آئی ٹی اعلیٰ عدلیہ کے حکم کے تحت تشکیل دی گئی ‘فوجی افسران کی شمولیت بھی اسی فیصلے کاحصہ تھی‘میرا یا وزارت داخلہ کا جے آئی ٹی کی تشکیل میں کوئی کردار نہیں تھا .

رجسٹرار سپریم کورٹ نے از خود ایف آئی اے ،ایس ای سی پی اور نیب سے 3,3نام مانگے ‘ آئی ایس آئی اور ایم آئی سے بھی رجسٹرار سپریم کورٹ نے خود ہی رابطہ قائم کیا ،تمام عمل میں کسی وزارت یا حکومتی شخصیت کو شامل نہیں کیا گیا۔

گزشتہ روز منی لانڈرنگ کیس کی سماعت کے دوران ریمارکس دیتے ہوئے چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس ثاقب نثار نے کہا تھا کہ نواز شریف کی جے آئی ٹی میں خفیہ اداروں کے افسران چوہدری نثار نے شامل کیے ،عدالتی حکم پر خفیہ اداروں کے افسران کو جے آئی ٹی میں شامل نہیں کیا گیا تھا۔نجی ٹی وی کے مطابق چیف جسٹس کے ریمارکس پر اپنے رد عمل دیتے ہوئے چوہدری نثار نے کہا کہ جے آئی ٹی اعلیٰ عدلیہ کے تین رکنی بینچ کے حکم کے تحت تشکیل دی گئی اورجے آئی ٹی میں فوجی افسران کی شمولیت بھی اسی فیصلے کاحصہ تھی۔

انہوں نے وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ میرا یا وزارت داخلہ کا جے آئی ٹی کی تشکیل میں کوئی کردار نہیں تھا ،فوجی افسران کی شمولیت سے متعلق میرا کوئی عمل دخل نہیں تھا۔ان کا کہنا تھا کہ رجسٹرار سپریم کورٹ نے از خود ایف آئی اے ،ایس ای سی پی اور نیب سے 3,3نام مانگے گئے، آئی ایس آئی اور ایم آئی سے بھی رجسٹرار سپریم کورٹ نے خود ہی رابطہ قائم کیا ،تمام عمل میں کسی وزارت یا حکومتی شخصیت کو شامل نہیں کیا گیا۔


ای پیپر