Jahangir Tareen, corrupt politician, Raja Riaz, sugar scandal, PTI, PM Imran Khan
15 اپریل 2021 (22:45) 2021-04-15

 اسلام آباد :وزیر اعظم عمران خان اور جہانگیر ترین میں بڑھتی دوریوں کو ختم کرنے کیلئے پارٹی کے سینئراراکین نے کوششیں تیز کر دیں ،ذرائع کے مطابق بعض حکومتی وزراجہانگیر ترین سے بیک ڈور رابطوں میں ہیں ۔

تفصیلات کے مطابق جہانگیر ترین اور وزیر اعظم عمران خان کے درمیان بڑھتے فاصلوں کوختم کرنے کیلئے بیک ڈور وزرا نے رابطے تیز کر دئیے ہیں ،ذرائع کے مطابق جہانگیر ترین کے معاملے پر حکومتی وزرا متحرک ہو چکے ہیں،پارٹی کی سینئر قیادت نے جہانگیر ترین اور وزیر اعظم عمران خان کے درمیان ملاقات کروانے کی کوششیں تیز کر دیں ہیں ۔

وزیر اعظم کے قریبی ساتھی بھی اس وقت جہانگیر ترین سے صلح کے خواہشمند ہیں ،پارٹی کے سینئراراکین چاہتے ہیں کہ معاملات کو افہا م و تفہیم سے حل کیا جائے ،اس سلسلے میں جہانگیرترین کے ہم خیال گروپ کے وزیراعظم سے ملاقات کیلئے رابطے جاری ہیں ، دوسری طرف حکومتی اراکین کےکا کہناتھا کہ ہم چاہتے ہیں پارٹی کے معاملات افہام و تفہیم سے حل کیے جائیں اور پارٹی میںاختلاف کو ہوا دینے اور سخت بیانات دینے سے گریز کیا جا سکے ۔

واضح رہے گزشتہ روز بھی وزیر اعظم عمران خان نے ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ ہماری حکومت میں طاقتور اورکمزور کیلئے کوئی الگ الگ پالیسی نہیں ،ہم چاہتے ہیں کہ طاقتور کو قانون کے کٹہرے میں لایا جائے ،ہمارے سے پہلی حکومتوں میں ایسا نہیں ہوتا تھا ۔

جہانگیر ترین سے متعلق سوال کے جواب میں وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ سوا سال میں اچانک چینی کی قیمت 26 روپے اوپر چلی گئی، ساٹھ ستر شوگر ملوں کی جیبوں میں 140 ارب روپے چلے گئے، میں کیا کرتا انہوں نے کارٹل بنا کر عوام کو لوٹا ہے ، عوام کا تحفظ حکومت کی ذمہ داری ہے ، سب کی بات سننے کے لیے تیار ہوں لیکن یہ نہیں ہوسکتا کہ غریب اور امیر کے لیے الگ الگ قانون ہو، کسی کو تحفظات ہو تو بات کر سکتا ہوں ، جن لوگوں نے اربوں روپے کرپشن کی ان کے شواہد موجود تھے۔


ای پیپر