وفاقی کابینہ نے تحریک لبیک پر پابندی لگانے کی منظوری دیدی
سورس:   فائل فوٹو
15 اپریل 2021 (17:00) 2021-04-15

اسلام آباد: وفاقی کابینہ نے انسداد دہشت گردی ایکٹ کے تحت تحریک لبیک پاکستان پر پابندی کی منظوری دے دی۔ کابینہ سے منظوری سرکولیشن سمری کے ذریعے لی گئی ہے۔

تفصیلات کے مطابق تحریک لبیک پر پابندی کی سفارش پنجاب حکومت نے کی تھی اور وزیراعظم عمران خان ٹی ایل پی پر پابندی کے مسودے کو پہلے ہی منظور کر چکے تھے۔ رپورٹ کے مطابق سمری میں کہا گیا تھا کہ تحریک لبیک کے کارکنوں کی جانب سے ملک بھر میں پُرتشدد کارروائیاں کی گئیں جن میں 2 پولیس اہلکار شہید اور 580 زخمی ہوئے۔ اس دوران قانون نافذ کرنے والے اداروں کی 30 گاڑیوں کو بھی نقصان پہنچایا گیا۔

دوسری جانب وزیر داخلہ شیخ رشید کی زیر صدارت وزارت داخلہ میں اعلیٰ سطح کا اجلاس ہو اجس میں ٹی ایل پی پر انسداد دہشت گردی ایکٹ کے تحت پابندی کے معاملے پر مشاورت کی گئی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ وزارت قانون کی جانب سے انسداد دہشت گردی ایکٹ کے تحت پابندی پر تحفظات کا اظہار کیا گیا ہے۔ وزارت قانون کی رائے میں تحریک لبیک پر پابندی کا معاملہ الیکشن کمیشن کا ہے۔

ذرائع کا مزید کہنا ہے کہ اجلاس میں تحفظ ناموس رسالت ﷺکے حوالے سے قومی اسمبلی میں قرارداد لانے پر بھی غورہوا۔

حکومت کی جانب سے امن و امان کی صورتحال برقرار رکھنے کیلئے تحریک لبیک کے 2063 کارکن گرفتار اور 115مقدمات درج کیے گئے۔

یہ امر قابل ذکر ہے کہ حکومت کی ہدایت پر اسلام آباد میں تحریک لبیک کے رہنماؤں اور کارکنوں کے خلاف آج مزید 7 مقدمات درج کئے گئے ہیں،ان مقدمات میں پولیس اہلکاروں پر حملے، کارسرکار میں مداخلت اور دہشت گردی کی دفعات شامل ہیں۔

بشکریہ(نیو نیوز)


ای پیپر