پاکستان کی سعودی عرب میں آئل فیلڈ پر ڈرون حملوں کی مذمت
14 ستمبر 2019 (17:21) 2019-09-14

اسلام آباد: پاکستان نے سعودی آئل پمپنگ فسیلیٹی پر ڈرون حملے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ڈرون حملے کے نتیجے میں آئل فیلڈ میں آگ لگنے اور میٹریل کو نقصان پہنچنے پر افسوس ہے۔ کمرشل سرگرمیوں کو سبوتاژ کرنے والوں کونظرانداز نہیں کیا جاسکتا۔

ترجمان دفترخارجہ ڈاکٹر محمد فیصل کا کہنا تھا کہ پاکستان پرامید ہے کہ ایسے حملے دوبارہ نہیں ہونگے، اسلام آباد اپنے سعودی بھائیوں کے ساتھ یکجہتی کا اظہار کرتا ہے۔یاد رہے کہ سعودی عرب میں دو آئل ریفائنریز پر ڈرون حملوں سے آگ بھڑک اٹھی تھی جس کے بعد کوئی جانی نقصان نہیں ہوا تھا۔

سعودی تیل کمپنی آرامکو کی دمام میں سب سے بڑی آئل ریفارئنری اور اسکے ساتھ موجود تیل کے کنوں میں زبردست آگ بڑھک اٹھی تھی سعودی ٹی وی کے مطابق آگ آج صبح اچانک بھڑکی اور پوری بقیق آئل فیلڈ کو لپیٹ میں لے لیا جس کے ساتھ ریفائنری بھی موجود ہے۔ یہ ریفائنری 7 ہزار ملین بیرل تیل روزانہ صاف کرنے کی صلاحیت رکھتی ہے۔

2006 میں بھی بقیق آئل فیلڈ کو خودکش حملوں کے ذریعے نشانہ بنانے کی کوشش کی تھی جسے حکام نے ناکام بنا دیا تھا جبکہ حال ہی میں یمنی خوثیوں نے عرب اتحاد کے خلاف 300 حملوں کا اعلان کیا تھا۔


ای پیپر