بیٹی کے داخلہ کیلئے رشوت دینے پر امریکی اداکارہ کو جیل کی سزا
14 ستمبر 2019 (14:39) 2019-09-14

نیو یارک : امریکا کے بہترین کالجوں میں رشوت دے کر بچوں کو داخلے دلانے کے سکینڈل میں امریکی اداکارہ فیلیسٹی ہفمین کو 14 دن کیلئے جیل بھیج دیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق اداکارہ فیلسیٹی ہفمین نے اعتراف کیا تھا کہ انہوں نے اپنی بیٹی کے داخلے کیلئے 15 ہزار ڈالر دے کر داخلہ ٹیسٹ ایس اے ٹی کے نمبر بڑھوا دیے تھے۔بوسٹن فیڈرل کورٹ کے جج نے ہفمین کو 14 دن قید، 30 ہزارڈالر جرمانے اور 250 گھنٹے کمیونٹی سروس کی سزا سنادی، دوران سماعت جج نے کہا کہ والدین کو پیغام ہے کہ وہ اپنی دولت کے بل بوتے پر مستحق بچوں کا حق چھین نہیں سکتے۔داخلے کے امتحانات میں سکور بڑھانے کیلئے یورسٹی انتظامیہ اور کوچز کو رشوت دینے کا اسکینڈل رواں سال مارچ میں سامنے آیاتھا جس میں اب تک 50 افرادکے خلاف فردجرم عائدکی جاچکی ہے، اس نیٹ ورک کا سرغنہ امریکی گلوکار ولیم رک ہے جنہوں نے25 ملین ڈالر وصول کرنے کا اعتراف کیا ہے۔

اسٹینفورڈ یورنیورسٹی کے سیلنگ کوچ جان ونڈیموئر کو 6 لاکھ 10 ہزار ڈالر وصول کرنے پر جون میں سزا سنائی گئی تھی۔ایک چینی خاندان نے بھی اعتراف کیاہے کہ انہوں نے بیٹی کو اسٹینفورڈ یونیورسٹی میں داخلہ دلانے کے لیے وینڈیموئر کی مدد سے رنگ لیڈر ولیم رک کو 65 لاکھ ڈالر ادا کیے۔اس اسکینڈل میں یونیورسٹی آف ساؤتھ کیلیفورنیا، ییل، جارج ٹاؤن اور یوسی ایل اے کے نام بھی سامنے آئے ہیں۔


ای پیپر