آئندہ کسی جنگ میں حصہ نہیں لینگے :وزیر اعظم عمران خان
14 نومبر 2019 (22:17) 2019-11-14

اسلام آباد:وزیرا عظم عمران خان نے بین الاقوامی کانفرنس میں خطاب کرتے ہوئے کہا پاکستان نے دہشتگردی کیخلاف جنگ میں بڑی قربانیاں دیں ،دہشگردی کیخلاف دوسروں کی جنگ پاکستان کیلئے تباہ کن ثابت ہوئی ،ہم نے سیکھا ہے کہ آئندہ کسی کی جنگ میںحصہ نہیں لینگے ،صرف مصالحت کا حصہ بنیں گے ۔

وزیراعظم نے کہا کہ پاکستان نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں بڑی قربانیاں دیں،دہشت گردی کے خلاف جنگ پاکستان کے لیے تباہ کن ثابت ہوئی،پاکستان نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں صف اول کاکرداراداکیا۔

عمران خان نے مزید کہا کہ چین نے جنگ کے بجائے عوام پرپیسہ خرچ کیا،امریکانے جنگ پراربوں ڈالر جھونک دیئے،ہم نے پاکستان میں سرمایہ کاری کے لیے شرائط آسان کیں،پاکستان کے دروازے دنیا بھر کے لیے کھول دیئے ہیں،ہم پاکستان میں کاروبار کوآسان بنارہے ہیں۔

وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ پاکستان افغان امن کے لیے کرداراداکررہاہے ،پاکستان افغان مسئلے کے سیاسی حل کی کوششیں کرہاہے،کوشش ہے پاکستان کے پڑوس میں مزیدتنازعات نہ ہوں،وزیراعظم نے کہا کہ پاکستان تمام ہمسایے ممالک سے اچھے تعلقات چاہتاہے،سعودیہ اورایران کے تنازعات بھی دور کرنے کے لیے کوشاں ہیں،بدقسمتی سےب ھارت میں انتہا پسندی کانظریہ فروغ پارہاہے،بھارت کامسئلہ آر ایس ایس کی انتہا پسندانہ سوچ ہے۔

اپنے خطاب میں عمران خان نے مزید کہا کہ پاکستان کشمیر کی وجہ سے خطرے کی زد میں ہے،بھارت میں اقلیتی برادری محفوظ نہیں،مقبوضہ کشمیرمیں کرفیوسے100سے زائد دن گزرچکے ہیں،2ایٹمی طاقتوں کی کشیدگی کہاں تک جاسکتی ہے کوئی نہیں بتاسکتا،دنیاکوسمجھناہوگا تنازع کشمیرکے باعث خطے میں کشیدگی ہے،مودی نے کشمیریوں کودیوارسے لگادیاہے۔


ای پیپر