Photo Credit Neo TV

نواز شریف نے جو کیا اس سے بڑی کیا غداری ہوسکتی ہے،عمران خان
14 May 2018 (19:09) 2018-05-14

اسلام آباد:چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے میاں نوازشریف کے متنازع بیان پر ان کا نام ای سی ایل میں ڈالنے اور آرٹیکل 6 کے تحت کارروائی کا مطالبہ کردیا۔بنی گالہ میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے عمران خان نے ممبئی حملوں سے متعلق نوازشریف کے متنازع بیان پر اپنے رد عمل میں کہا کہ نوازشریف نے کس سیاق وسباق میں انٹرویو دیا دیکھنا ہوگا، ان کے بیان پر بھارت کو بہت فائدہ ہوا ہے، بھارت اور اسرائیلی لابی مغرب میں اکٹھے آپریٹ کرتے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ نواز شریف نے جو کیا اس سے بڑی کیا غداری ہوسکتی ہے، بھارتی لابی اس بیان کو آگے لے کر جائے گی تو ہم بلیک لسٹ میں جاسکتے ہیں، چیئرمین پی ٹی آئی نے شہبازشریف اور وزیراعظم سے مستعفی ہونے، نوازشریف کا نام ای سی ایل میں ڈالنے اور ان کے خلاف آرٹیکل 6کے تحت کارروائی کا مطالبہ کیا جب کہ ساتھ ہی ان کا کہنا تھاکہ وزیراعظم سے مطالبہ کرتا ہوں وہ اسمبلی میں آئیں اور وضاحت کریں۔

انہوں نے کہا کہ بھارت پاکستان کو تنہا کرنے کے لیے کوشاں ہے، سب کو سمجھنا چاہیے کہ یہ گیم کیوں بنایاگیا، بھارتی میڈیا میں تاثر دیا گیا کہ یہاں سب کچھ فوج کرارہی ہے۔ عمران خان نے کہا کہ ڈان لیکس میں یہ سب کچھ کہا گیا تھا، فوج پر الزام لگایا گیا، پاناما پیپرز آیا تو نوازشریف نے فوج اور عدلیہ پر حملے شروع کردیئے، آج نواز شریف کو این آر او مل جائے تو فوج اور عدلیہ اچھی ہوجائے گی، ختم نبوت کے قانون میں خفیہ طور پر ترمیم کی گئی، ڈان لیکس، ختم نبوت قانون ایک ہی کڑی نظر آرہی ہے۔

نوازشریف نے پاکستان کو بین الاقوامی سطح پر نقصان پہنچایا، شہبازشریف اور وزیراعظم کہتے ہیں وہ نوازشریف کے ساتھ ہیں، دونوں بتائیں بھارتی میڈیا نے نوازشریف کے بیان میں کیا غلط پڑھا، عمران خان نے کہا کہ بھارت الزام لگاتا ہے کہ پاکستان اپنے لوگ کشمیر میں بھیجتا ہے اور کشمیریوں کو پاکستان بھڑکاتا ہے، بھارت ہمیشہ ہماری فوج کے خلاف بیان دیتا ہے، نوازشریف کے بیان سے بھارت کو بہت فائدہ ہواہے۔

بھارتی میڈیا میں تاثر دیا گیا کہ پاکستان میں سب کچھ فوج کرارہی ہے۔چیئرمین تحریک انصاف نے کہا کہ نوازشریف نے بڑی سوچ سمجھ کر کہا کہ غیر ریاستی عناصر کو روک سکتے تھے، نواز شریف عالمی اسٹیبلشمنٹ سے اپیل کررہے ہیں کہ مجھے بچاو، ملک کا سربراہ باہر کے لوگوں کو کہہ رہا ہے کہ ہماری مدد کرو ہم بے بس ہیں۔ انہوں نے کہا کہ نواز شریف کا نام ای سی ایل میں شامل کیا جائے۔

عمران خان نے کہا کہ برکھادت نے کتاب میں لکھا کٹھمنڈو میں نوازشریف اور مودی چھپ کرملے جبکہ نوازشریف اور مودی کی ملاقات جندل نے کرائی۔ نواز شریف 300 ارب روپے بچانے کیلئے ہاتھ پاوں مارتے ہوئے این آر او کیلئے بیرونی طاقتوں کا ساتھ دے رہے ہیں۔ عمران خان نے مزید کہا کہ وزیراعظم اور شہباز شریف کو ملک کی فکر نہیں ہے، انہیں استعفی دے دینا چاہیے


ای پیپر