ایم کیو ایم کے رہنما شبیر قائم خانی پاک سرزمین پارٹی میں شامل
14 اپریل 2018 (15:10)

کراچی: ایم کیو ایم کے رہنما شبیر قائم خانی نے پاک سرزمین پارٹی میں شامل ہونے کا فیصلہ کر لیا، باضابطہ اعلان مصطفی کمال کے ساتھ پریس کانفرنس میں کرینگے۔


تفصیلات کے مطابق ایم کیو ایم بہادر آباد کے ناراض رہنما شبیر قائم خانی نے پیپلز پارٹی اور پاکستان تحریک انصاف کی جانب سے پارٹی میں شامل ہونے کے دعوت کو رد کرتے ہوئے پاک سرزمین پارٹی میں شامل ہونے کا فیصلہ کر لیا ، شبیر قائم خانی نے چار اپریل کو ایم کیو ایم چھوڑنے کا اعلان کرتے ہوئے پارٹی کی بنیادی رکنیت سے بھی استعفیٰ دیا تھا، رکن رابطہ کمیٹی شبیر قائم خانی کا کہنا تھا کہ آپس کی لڑائی میں بہت کچھ کھودیا، میں نے احتجاجا کسی یوم تاسیس میں شرکت نہیں کی جب کہ ایم کیو ایم گروپ بندی کی وجہ سے ٹوٹ پھوٹ کا شکار ہے۔


شبیر قائم خانی نے کہا کہ تقسیم درتقسیم کی وجہ سے ہمیں سخت نقصان اٹھانا پڑرہا ہے، ہم نے محبت کرنے والے ساتھی گنوادیئے جب کہ پی آئی بی اور بہادر آباد میں اختلافات کی وجہ سے اہم رہنما پارٹی چھوڑنے پر مجبور ہیںپانچ اپریل کو متحدہ پی آئی بی کے سربراہ فاروق ستار نے شبیر قائم خانی سے ملاقات کی اور ان کے تحفظات دور کرنے کی یقین دہانی کرائی، فاروق ستار نے شبیر قائم خانی کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ آپ سینئر رہنما ہیں پارٹی کو چھوڑ کر مت جائیں، پارٹی آپ کے جانے کا نقصان برداشت نہیں کرسکتی، پی آئی بی اور بہادر آباد کے معاملات کو حل کرنے کی کوششیں کررہے ہیں۔


شبیر قائم خانی کا کہنا کہ پارٹی کی تقسیم کے حق میں نہیں ہوں اس وقت میں بہت پریشان ہوں، پارٹی چھوڑنے کا فیصلہ بہت سوچ سمجھ کر کیا ہے ۔انہوں نے کہا کہ پی آئی بی اور بہادر آباد ایک ہوجائیں گے تو میں واپس آجائوں گا۔آٹھ اپریل کو پاکستان پیپلز پارٹی کا وفد سعید غنی کی قیادت میں ایم کیو ایم پاکستان کے رہنما شبیر قائم خانی کی رہائشگاہ پہنچا جہاں پیپلز پارٹی کی جانب سے شبیر قائم خانی کو پارٹی میں شمولیت کی دعوت دی گئی۔


ای پیپر