Violation of LOC, firing of Indian Army, 1 civilian martyred, 2 women injured
13 نومبر 2020 (10:52) 2020-11-13

راولپنڈی:بھارتی فوج کی ایل او سی پر جنگ بندی معاہدے کی پھر خلاف ورزی،فائرنگ سے ایک شہری شہید،2خواتین سمیت 3شہری زخمی ہوگئے۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ(آئی ایس پی آر) کی جانب سے جاری کردہ اطلاعات کے مطابق بھارتی فوج نے خنجر اور رکھ چکری سیکٹرز میں شہری آبادی کو نشانہ بنایا جبکہ بھارتی کی فوج جانب سے مارٹر گولوں اور راکٹس کا استعمال کیا گیا۔

ڈی جی آئی ایس پی آر نے مز ید کہا کہ پاک فوج نے بھرپور جوابی کارروائی کرتے ہوئے فائرنگ کرنے والی بھارتی چوکیوں کو نشانہ بنایا۔

یاد رہے کہ اعدادوشمار کے مطابق ہندوستان کی فوجوں کی جانب سے جنگ بندی معاہدے کی رواں سال 2600 سے زائد مرتبہ خلاف ورزی ہو چکی ہے۔

پاکستان کی جانب سے ہمیشہ تحمل کا مظاہرہ کیا جاتا ہے لیکن شہری آبادی کو نشانہ بنانا اور بلا اشتعال فائرنگ انڈٰین فوج کا وطیرہ بن چکی ہے۔ اب تک اس اشتعال انگیزی میں بیس بے گناہ شہری شہید جبکہ دو سو سے زائد زخمی ہو چکے ہیں۔

 گزشتہ روز بھارت کے سینئر سفارتکار کو دفتر خارجہ طلب کرکے ایل او سی پر روز بروز بڑھتی ہوئی اشتعال انگیزیوں پر شدید احتجاج ریکارڈ کرایا گیا تھا۔ بھارتی سفارتکار کو احتجاجی مراسلہ تھماتے ہوئے کہا گیا تھا کہ ان کا ملک بین الاقوامی قوانین کی خلاف ورزیوں اور شہری آبادیوں کو نشانہ بنانے کی کارروائیوں سے باز آئے۔


ای پیپر