پاکستان کی ہائی پروفائل گرفتاری،نواز شریف ،مریم نواز کو گرفتار کر لیا گیا
13 جولائی 2018 (20:50) 2018-07-13

لاہور :پاکستان مسلم لیگ (ن) کے قائد محمد نواز شریف نے اور انکی صاحبزادی مریم نواز کے طیارے نے علامہ اقبال انٹرنیشنل ایئرپورٹ پر 8بج کر 47منٹس پر لینڈ کیا جبکہ تقریباً9:15 پر نیب حکام نے طیارے میں داخل ہوکر گرفتار کرلیا اور ہیلی کاپٹر میں بٹھا کر اڈیالہ جیل راولپنڈی منتقل کردیا تاہم نواز شریف نے گرفتاری سے قبل نیب حکام سے کہاکہ انہیں کارکنوں سے ملنے دیا جائے وہ ان سے ملاقات اور خطاب کرنا چاہتے ہیں ۔

تفصیلات کے مطابق جمعہ کو نواز شریف اور مریم نواز کے طیارے نے لاہور ایئرپورٹ پر 8بج کر 47منٹس پر لینڈ کیا جس کے بعد نیب ٹیم اور رینجرز اہلکاروں نے طیارے میں داخل ہوکر انہیں تقریباًنو بجکر پندرہ منٹ پر انہیں گرفتار کیا،نواز شریف کو رینجرز اہلکاروں نے حراست میں لیا جب کہ مریم نواز کو خواتین اہلکاروں نے گرفتار کیا ، نواز شریف اور مریم نواز کی گرفتاری امیگریشن کے بعد عمل میں لائی گئی۔

نیب کی 16رکنی ٹیم ڈی جی نیب لاہور سلیم شہزاد کی سربراہی میں انہیں گرفتار کرنے کیلئے پہلے سے ایئرپورٹ پر موجود تھی، امیگریشن کی نگرانی کیلئے ڈائریکٹر ایف آئی پنجاب ڈاکٹر عثمان بھی ہوائی اڈے پر موجود تھے۔ ان کو گھیرے میں لے کر ان کا پاسپورٹ بھی لے لیاگیا ،ایئرپورٹ کے گردونواح میں سخت سیکیورٹی انتظامات کےلئے گئے اور ایئرپورٹ کو رینجرز نے اپنے کنٹرول میں لے رکھا تھا۔

صدر مسلم لیگ (ن) شہباز شریف اور حمزہ شہباز سمیت مسلم لیگ (ن) کے دیگر سینئر رہنما بھی اپنے اپنے علاقوں سے ریلیاں لے کر نوازشریف کے استقبال کےلئے ایئرپورٹ پر پہنچنا چاہتے تھے مگر سخت سیکیورٹی انتظامات اور جگہ جگہ کنٹینرز لگے ہونے کی وجہ سے بہت کم تعداد میں لوگ ایئرپورٹ تک پہنچ سکے ۔

دن بھر لاہور جانے والے تمام راستوں کو کنٹینرز لگا کر بلاک کردیا گیاتھا ، دن بھر لاہور میں موبائل سروس اور انٹرنیٹ سروس معطل رہی جبکہ لاہور سمیت پنجاب کے مختلف شہروں میں کئی کئی گھنتوں تک بجلی بھی بند کردی گئی تھی ۔ واضح رہے کہ ایون فیلڈ ریفرنس میں نیب عدالت کی جانب سے نوازشریف کو 12سال اور مریم نواز8سال قید کی سزا سنائی گئی تھی ۔


ای پیپر