Nadeem Afzal Chan Resignation
13 جنوری 2021 (22:04) 2021-01-13

اسلام آباد:تفصیلات کے مطابق ندیم افضل چن نے ایک ایسے وقت میں وزیر اعظم عمران خان کا ساتھ چھوڑ دیا جب گزشتہ روز عمران خان نے اہم ترین اجلاس میں واضح کیا تھا کہ جو کوئی بھی حکومتی پالیسی نہیں مانتا وہ مستعفی ہو جائے ،اگلے ہی روز ندیم افضل چن کا استعفیٰ آنا پارٹی اراکین کیلئے ایک بڑا دھچکا ہے ،ندیم افضل چن کے پاس  معاون خصوصی برائے پارلیمانی روابط کا عہدہ بھی تھا۔

ندیم افضل چن نے اپنا استعفیٰ وزیراعظم بھجواتے ہوئے کہا کہ فی الحال وہ اپنے عہدے سے استعفیٰ دے رہے  ہیں لیکن تحریک انصاف کیساتھ ہی رہینگے ،واضح رہے چند روز قبل ندیم افضل چن نے اپنے ٹوئٹ میں واضح کیا تھا کہ یہ میرے کمزور ایمان کی نشانی ہے کہ میں نے صرف مظلومین کے ساتھ ہمدردی کی سیاست نہیں کی،ان کا کہنا تھا کہ آج کل مقبول بیانیہ صرف سیاستدانوں کو گالیاں دینا ہے جو میں نہ پہلے دیتا تھا ناں اب دوں گا۔

اس سے قبل کوئٹہ میں جاری کان کنوں کے لواحقین کے دھرنے میں وزیر اعظم کے نہ جانے کے فیصلے اور حکومتی پالیسی پر ندیم افصل چن نے ٹوئٹر پر بھی تحفظات کا اظہار کیا تھا اور اشاروں کنایوں میں حکومتی پالیسی پر ناپسندیدی کا اظہار بھی کیا۔


ای پیپر