فوٹو :فیس بک

بڑے منی لانڈرنگ میں آصف زرداری بھی ملوث ہے :عمران خان
13 اپریل 2018 (22:30)

گوجرانوالہ: پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے دعویٰ کیا ہے کہ اگلی باری خواجہ آصف کے جیل جانے کی ہے .ملک کے بڑے بڑے منی لانڈلر میں آصف زرداری بھی ملوث ہے ، ان سب کے خلاف جنگ جاری رہے گی .سندھ میں گنے کے کاشتکار بھی رو رہے ہیں، ہم لاہور کے جلسے میں اپنے 100 دن کا پلان دیں .تاریخ میں پہلی بار ایک طاقتور کے خلاف فیصلہ دیا جس پر سپریم کورٹ کو سلام پیش کرتے ہیں .ملک میں نیا دور شروع ہونے والا ہے ، سب مطمئن ہوجائیں۔ جمعہ کوگوجرانوالہ میں کارکنوں سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان نے کہاکہ اگر کوئی وزیراعظم یا وزیر ہے اور اس کی جائیداد پکڑی جائے تو اس کی ذمہ داری ہوتی ہے کہ جواب دے لیکن پاناما لیکس میں جائیداد کے باوجود نواز شریف نے کہا کہ ان کے نام پر یہاں کچھ نہیں ہے مگر جائیداد نکلنے کے بعد ان کے پاس جھوٹے قطری خط کے علاوہ اور کچھ نہیں تھا۔

چیئرمین پی ٹی آئی نے کہا کہ چھوٹے اور بڑے میاں کا ایک ہی مقصد رہا ہے کہ پیسہ بنایا جائے اور ملک سے باہر بھیجا جائے، ملک کے بڑے بڑے منی لانڈلر میں آصف زرداری بھی ملوث ہے ، ان سب کے خلاف جنگ جاری رہے گی۔ عمران خان نے کہا کہ پارٹی کا منشور بتاتا ہے کہ اس کا بجٹ کیا ہے ، موجودہ حکومت کے پاس 45 دن رہ گئے ہیں تو یہ کیسے ایک سال کا بجٹ بنا سکتے ہیں، اگست ،ستمبر میں نئی حکومت اپنا منشور لے کر آئے گی تو بجٹ ان کا اور منشور کسی اورکا، یہ نہیں ہوسکتا۔انہوں نے کہا کہ (ن) لیگ کی حکومت نے کسانوں کا بیڑا غرق کردیا جب کہ سندھ میں گنے کے کاشتکار بھی رو رہے ہیں، ہم لاہور کے جلسے میں اپنے 100 دن کا پلان دیں۔سپریم کورٹ کے فیصلے سے متعلق عمران خان کا کہنا تھاکہ جہانگیر ترین نے فیصلہ قبول کیا ہے ، ان کی اپیل فی الحال سپریم کورٹ نے سننی ہے ۔ عمران خان نے کہا اگلی باری خواجہ آصف کے جیل جانے کی ہے ۔

عمران خان نے کہاکہ (ن) لیگ کی جب بھی حکومت آئی غریبوں بالخصوص کسانوں کا برا حال ہوا، ادارے تباہ کردیئے گئے، پنجاب میں 10 سال میں ایک ہسپتال نہیں بنایا گیا، نوازشریف، شہبازشریف اور بیگم نواز لندن سے علاج کراتے ہیں . لاہور کے ہسپتالوں میں ایک ایک بستر پر پانچ پانچ مریض پڑے ہوتے ہیں۔ سندھ میں بھی گنے کے کاشتکار رو رہے ہیں، شوگر ملوں سے پیسے لینے کےلئے کسانوں کو برسوں اانتظار کرنا پڑتا ہے ,ملکی ترقی کے لئے کسانوں و کاشتکاروں پر سرمایہ کاری کی جاتی ہے لیکن یہاں چھوٹے میاں اور بڑے میاں مل کر 300 ارب کی چوری کرتے ہیں اور بیرون ملک بھجوا کر پوچھتے ہیں مجھے کیوں نکالا۔ عمران خان نے کہا کہ میں نے بھی جیل میں 8 دن گزارے لیکن مجھے ایک بھی بڑا ڈاکو نہیں ملا، سب غریب چور تھے اور دوسری جانب قوم کا پیسہ چوری کرنے والے بڑے و طاقتور ڈاکوئوں کو پروٹوکول دیا جاتا ہے ، ماضی میں سپریم کورٹ ہمیشہ طاقتور کے ساتھ رہا، لیکن تاریخ میں پہلی بار ایک طاقتور کے خلاف فیصلہ دیا جس پر سپریم کورٹ کو سلام پیش کرتے ہیں۔پی ٹی آئی چیئرمین نے کہا کہ اب سنا ہے کہ اڈیالہ جیل کی صفائی کی جارہی ہے کیوں کہ ایک بڑا ڈاکو آرہا ہے ، شہبازشریف اڈیالہ جیل کی صفائی اپنے بڑے بھائی کے لئے کرارہے ہیں ,سپریم کورٹ کے یہی فیصلے نیا پاکستان بنارہے ہیں .

ہم تمام کرپٹ عناصر کے خلاف ہیں ، بڑے منی لانڈرر، شریف خاندان اور آصف زرداری بھی اس فہرست میں شامل ہیں اور ان سب کے خلاف ہماری جنگ ہے ، چھوٹے میاں صاحب سے پوچھتا ہوں کہ قوم کو کیا پیغام دے رہے ہیں، وہ نوجوانوں کو کہتے ہیں کہ چھوٹی چوری کرو گے توزیادہ مار پڑے گی۔وزیر آباد میں کارکنوں سے خطاب میں چیئرمین پی ٹی آئی نے کہا کہ 30 سال سے چھوٹے میاں اور بڑے میاں پیسہ چوری کرکے باہر لے جارہے ہیں اور پھر کہتے ہیں مجھے کیوں نکالا۔انہوں نے کہا کہ نوازشریف کہتے ہیں اداروں کو حدود میں کام کرنا چاہیے لیکن آپ نے ادارے تباہ کردیئے، اگر سپریم کورٹ یہ فیصلہ نہ کرے تو تمہیں قوم کا خون چوسنے سے کون روکے گا، سپریم کورٹ کو سلام پیش کرتے ہیں، اعلیٰ عدلیہ نے وہ کام کیا جو اس کورٹ نے کبھی نہیں کیا، ماضی میں سپریم کورٹ ہمیشہ طاقتور کے ساتھ رہی، پہلی مرتبہ سپریم کورٹ نے طاقتور کے خلاف فیصلہ دیا۔انہوں نے کہا کہ ملک میں نیا دور شروع ہونے والا ہے ، سب مطمئن ہوجائیں۔


ای پیپر