جہلم میں غیرت کے نام پر ایک اور لڑکی قتل
13 اپریل 2018 (18:56) 2018-04-13

جہلم : جہلم کی تحصیل پنڈ دادن خان میں مبینہ طور پر غیرت کے نام پر ایک لڑکی کا قتل کردیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق جلال پور شریف کی رہائشی شگفتہ اپنی پسند کی شادی کرنا چاہتی تھی، گزشتہ رات شگفتہ گھر سے بھاگ کر نوجوان حسنین کے گھر آگئی ھی۔بعدازاں لڑکی کے اہلخانہ چند روز میں حسنین سے شادی کروانے کا کہہ کر اسے گھر واپس لے گئے تاہم گھر پہنچ کر مبینہ طور پر شگفتہ کو گلا دبا کر قتل کردیا گیا۔واقعے کی اطلاع ملتے ہی پولیس نے لڑکی کی لاش تحویل میں لے کر پوسٹ مارٹم کے لیے تحصیل ہیڈ کوارٹرز اسپتال منتقل کردی۔پولیس کا کہنا ہے کہ پوسٹ مارٹم رپورٹ آنے کے بعد قانونی کارروائی کی جائے گی۔

پنجاب سمیت ملک بھر میں خواتین کو غیرت کے نام پر قتل کرنے کے واقعات سامنے آتے رہتے ہیں اور ہر سال سیکڑوں خواتین کو ان کے اپنے ہی پیارے غیرت کے نام پر زندگی سے محروم کردیتے ہیں۔ دوسری جانب موثر قانون سازی نہ ہونے کی وجہ سے بھی پاکستان میں ایسے قتل کی وارداتوں میں نمایاں کمی نہیں آئی۔


ای پیپر