بجٹ تقریر کے دور ان اپوزیشن کا زبردست احتجاج
12 جون 2020 (18:43) 2020-06-12

اسلام آباد: قومی اسمبلی میں اپوزیشن نے بجٹ تقریر کے دور ان زبردست احتجاج کرتے ہوئے حکومت کے خلاف شدید نعرے بازی کی ، اپوزیشن اراکین بجٹ نا منظور ،علی بابا چالیس چور ، عمران تیرے عوام پہ وار بے شمار ٗ بے شمار ، نیب نیازی گٹھ جوڑ نا منظور کے نعرے لگاتے رہے جبکہ حکومتی اراکین نے اپوزیشن کے عوامی مطالبات سننے سے انکار کرتے ہوئے ہیڈ فون لگا لئے ۔

جمعہ کو وفاقی حکومت کی جانب سے وفاقی وزیر حماد اظہر نے آئندہ مالی سال 2020-21کا بجٹ پیش کیا ۔ اس دور ان اپوزیشن نے شدید احتجاج کرتے ہوئے حکومت مخالف زبردست نعرے بازی کی ۔ بجٹ تقریر کے دور ان اپوزیشن اراکین کھڑے ہوکر ڈیسک بجاتے رہے اور نعرے بازی کا سلسلہ جاری رکھا ۔ اپوزیشن کی جانب سے علی بابا چالیس چور،نیازی چور ،عمران تیرے عوام پہ وار ،بے شمار بے شمار ،ڈنکی راجہ نامنظور،نیب نیازی گٹھ جوڑ نامنظور،نا اہل حکومت نامنظور کے نعرے لگائے ۔

اپوزیشن کے پلے کارڈ پز ایک کروڑ نوکریاں کہاں گئی؟،اسٹیل ملز ملازمین کا معاشی قتل نامنظور،پیٹرول غائب،بجلی غائب، گیس غائب، آٹا غائب، چینی عائب، چینی چور حکومت نامنظور،جعلی حکومت، جھوٹے دعوے،دھاندھلی کی حکومت نامنظورچینی چور، آٹا چور حکومت نامنظور،بجلی اور گیس کی قیمتوں میں اضافہ نامنظور،کرپشن اور نااہلی کی داستان، عمران خان عمران خان نعرے لگائے ۔حکومتی نمائندوں نے بھی اپوزیشن کے عوامی مطالبات سننے سے انکار کرتے ہوئے اپوزیشن کے نعروں سے بچنے کے لیے ہیڈ فون لگالیئے۔


ای پیپر