فوٹو بشکریہ فیس بک

سعودی عرب میں حسین نواز نے 25 اور پھر 50 کروڑ کی آفر کی: جج ارشد ملک
12 جولائی 2019 (14:43) 2019-07-12

اسلام آباد: جج ارشد ملک نے بیان حلفی میں کہا کہ فیصلے کے بعد دھمکیاں دی گئیں اور کہا گیا کہ 5،4 قتل کر چکے ہیں، مزید قتل بھی کرسکتے ہیں۔

جج ارشد ملک کے اسلام آباد ہائیکورٹ میں جمع کروائے گئے حلف نامے کی کاپی نیو نیوز نے حاصل کر لی۔ بیان حلفی میں کہا گیا کہ سماعت کے دوران مجھے رائیونڈ لے جایا گیا اور نواز شریف سے ملاقات کروائی گئی۔ نواز شریف نے کہا جو یہ لوگ کہہ رہے ہیں آپ تعاون کریں۔ ناصر بٹ اور ایک شخص مسلسل مجھ سے رابطے میں رہے۔

بیان حلفی میں مزید کہا گیا کہ عمرہ کرنے گیا تو ان کے لوگ پہلے سے موجود تھے۔ حسین نواز نے کہا آپ تعاون کریں بیرون ملک سیٹ کردیں گے۔ سعودی عرب میں حسین نواز نے 25 اور پھر 50 کروڑ کی آفر کی۔ حسین نواز نے کہا پاکستان جانے کی کوئی ضرورت نہیں، اگر کسی اور ملک جانا ہے تو دستاویزات بنا دیتے ہیں۔

جج ارشد ملک نے کہا کہ ملتان کی نجی محفل کی 16 سال پرانی ویڈیو پتا نہیں انہیں کیسے مل گئی۔


ای پیپر