پولیس نے گرفتار کیوں کیا ؟عطااللہ تارڑ نے حقائق سے پردہ اُٹھا دیا 
12 فروری 2021 (19:24) 2021-02-12

ڈسکہ :پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما عطا اللہ تارڑ نے گرفتاری کی اصل وجوہات بتا دیں ،عطا اللہ تارڑ کا کہنا تھا کہ پولیس نے اسلحہ لائسنس چیک کرنے کیلئے پوچھ گچھ کرتے ہوئے ملازمین پر تشدد کرنا شروع کر دیا اور جب معاملہ رفع دفع کروانے کی کوشش کی گئی تو ملازمین کیساتھ مجھے بھی پولیس وین میں بٹھا لیا گیا ۔

پولیس سٹیشن وزیر آباد کے با ہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے عطا تارڑ کا کہنا تھا کہ جتنے زخم سی پی او اور آر پی او نے دئیے ہیں ان کا بدلہ ضرور لیا جائیگا ،انہوں نے کہا ڈی ایس پی اور ایس ایچ او تھانہ وزیر آباد نے ہم پر دھاوا بولا اور اسلحہ لائسنس چیک کرنے کے بہانے ملازمین پر تشدد شروع کر دیا ۔

عطاتارڑ کے بقول فوٹیج بنانےوالے راہ گیروں پر بھی تشدد کیا گیا جب کہ میرے ڈرائیور کو بھی تشدد کا نشانہ ‏بنایا گیا اگر انتخاب پولیس نےلڑناہےتوپولیس سےبھی نمٹناجانتےہیں،دوسری جانب وزیراعلیٰ پنجاب کی معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے لیگی رہنما عطااللہ تارڈ ‏کی گرفتاری ‏کو ڈرامہ قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ لیگی رہنما نے خود پولیس موبائل میں بیٹھ کر گرفتاری کا ڈرامہ ‏رچایا۔


ای پیپر