PDM, Lahore jalsa, PTI government, Sheikh Rashid, Maryam Nawaz
12 دسمبر 2020 (15:03) 2020-12-12

اسلام آباد: وزیر داخلہ شیخ رشید نے کہا کہ اپوزیشن جتنا مرضی زور لگا لے نتیجہ صفر بٹا صفر ہی نکلے گا۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیر داخلہ نے کہا کہ آر پار کی بجائے سیاسی کشتی منجدھار میں ڈوبے گی، انہوں نے پی ڈی ایم پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ لیڈر کال دیتا ہے گلی محلے میں دو مہینوں سے دعوت نامے نہیں بانٹتا پھرتا۔

شیخ رشید نے کہا کہ لوگوں کو خطرناک عالمی وبا کا بھی پتہ ہے اور نیکٹا کے ہائی الرٹ کا بھی۔ اس کے باوجود اپوزیشن کی زد کی سیاست بند گلی کی جانب جا رہی ہے۔ جس کا نتیجہ کل مایوسی اور ناکامی کی صورت میں نکلے گا، بلآخر عمران خان ہی سرخرو ہوگا۔

دوسری جانب وزیراعظم کے معاون خصوصی شہباز گل کا کہنا ہے کہ حکومت پی ڈی ایم کو جلسے کی باقاعدہ اجازت نہیں دے سکتی، انہوں نے کہا کہ این سی سی ، عدالتی فیصلے کے مطابق باقاعدہ اجازت نہیں دی جاسکتی۔

ادھر نفیسہ شاہ کا کہنا ہے کہ لاہور جلسہ ضرور ہو گا، انہوں نے بتایا کہ پاکستان پیپلز پارٹی ارکان اپنے استعفے جمع کرا رہے ہیں۔

پیپلز پارٹی کی رہنما نے کہا کہ سی ای سی میٹنگ میں استعفے اسپیکر کے پاس جمع کرانے پر تبادلہ خیال ہو گا، انہوں نے واضح کیا کہ پیپلز پارٹی کا ہر عمل پی ڈی ایم اعلامیہ کے مطابق ہو گا۔

نفیسہ شاہ کا کہنا تھا کہ کٹھ پتلیوں کو خیر باد کہنے کا وقت آگیا ہے، حکومت اپوزیشن کے خلاف اوچھے ہتھکنڈے استعمال کر رہی ہے۔ ہر جلسے سے پہلے تھریٹ الرٹس جاری کیے جاتے ہیں۔ حکومت اپوزیشن کے جلسے دیکھ کر اب منتوں پر اتر آئی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ خان صاحب نے تمام مافیاز اپنے اردگرد اکٹھے کر لیے ہیں۔

وزیر اعظم اپنے ذاتی دوستوں کو وزارتیں دیکر نواز رہے ہیں جو کہتے ہیں جمہوریت ہو وہ ڈی جے بٹ سے خوفزدہ ہیں۔


ای پیپر