PTI government, sugar price, PM Imran Khan, Lahore jalsa, PDM
12 دسمبر 2020 (13:45) 2020-12-12

اسلام آباد: وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ ایک مہینہ پہلے 102 روپے میں فروخت ہونے والی چینی ملک بھر میں اوسطاً 81 روپے فی کلو میں فروخت ہو رہی ہے۔

وزیر اعظم نے کہا کہ کثیر جہتی حکمت عملی کے ذریعے چینی کی قیمتوں کو کم کرنے پر اپنی ٹیم کو مبارکباد دیتا ہوں۔ عمران خان کا مزید کہنا تھا کہ حکومت آئندہ چند دنوں میں باقی اشیا ضروریہ کی قیمتوں میں کمی لائے گی۔

ادھر وفاقی وزیر اسد عمر کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی کی حکومت نے اہم قدم اٹھاتے ہوئے صرف ایک ماہ میں چینی کی قیمت میں کمی کروائی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ حکومت کا سامنا کرپٹ سیاستدانوں اور مافیا سے ہے جن کو رائے راست پر لانا آسان نہیں۔ لیکن پھر بھی اُن کو یقین ہے کہ عمران خان ملک کا نظام ٹھیک کر کے ہی دم لیں گے۔

خیال رہے کہ ادارہ شماریات کی جانب سے ہفتہ وار پورٹ کے مطابق حالیہ ہفتے کے دوران مہنگائی کی شرح میں اعشاریہ 26 فیصد کمی ہوئی ہے جبکہ 16 اشیائے خورد و نوش کی قیمتوں میں اضافہ ہوا ہے۔

واضح رہے کہ پاکستانی عوام کو حکومت سے شکوہ ہے کہ وہ ملک سے مہنگائی کا خاتمہ کرنے میں ناکام رہی ہے۔ عوام کا کہنا ہے کہ عمران خان قوم سے کیے وعدے پورے کرنے میں بھی کامیاب نہ ہو سکے۔

ادھر پی ڈی ایم کا کہنا ہے کہ حکومت نے غریب عوام کی مشکلات میں اضافہ کر دیا ہے اس لیے وہ عوام کو اُن کا حق دلانے کے لیے احتجاج کرنے پر مجبور ہوئے ہیں۔ اپوزیشن رہنماوں نے اس حوالے سے عوام سے اپیل کی ہے کہ وہ حکومت مخالف جلسوں میں اُن کا ساتھ دیں تاکہ حکومت کو گھر بھیجا جائے۔

یاد رہے کہ اس سلسلے میں پی ڈی ایم نے حکومت کے خلاف ایک تحریک چلا رکھی ہے۔


ای پیپر