Nawaz Sharif, Shehbaz Sharif, political situation, country
12 دسمبر 2020 (11:29) 2020-12-12

لاہور: احتساب عدالت میں اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کا نواز شریف اور سلیمان سے ٹیلی فونک رابطہ، دونوں بھائیوں نے ایک دوسرے کی خیریت دریافت کی اور ملکی سیاسی صورتحال پر تبادلہ کیا۔

تفصیلات کے مطابق ٹیلی فون پر نواز شریف اور شہباز شریف نے لاہور جلسے ، ن لیگ کے رکن صوبائی اور قومی اسمبلی کے استعفوں اور اسلام آباد لانگ مارچ کے حوالے سے بات چیت کی۔ اس کے علاوہ شہباز شریف نے بیٹے سلیمان شہباز اور فیملی کے دیگر افراد سے بھی بات کی اور اُن کی خیریت دریافت کی۔

ادھر احتساب عدالت لاہور میں پیشی کے موقع پر لیگی ترجمان مریم اورنگزیب کی شہباز شریف اور حمزہ شہباز کو سیاسی صورتحال پر بریفنگ، مریم اورنگزیب نے بتایا کہ مریم نواز نے لاہوریوں کو خود کونے کونے میں جا کر جلسہ کی دعوت دی ہے ، شہباز شریف نے مریم اورنگزیب کو مریم نواز کے لیے خصوصی پیغام بھی دیا۔

دوسری جانب معاون خصوصی اطلاعات پنجاب فردوس عاشق اعوان نے اپنے ٹویٹ میں کہا ہے کہ لاہور انتطامیہ نے عالمی وبا اور دہشتگردوں کے حملے کے پیش نظر پی ڈی ایم کو لاہور میں جلسے سے روک دیا ہے۔ انہوں نے پی ڈی ایم رہنماوں پر واضح کیا کہ اس کے باوجود بھی اگر انہوں نے لاہور میں جلسہ کیا تو حکومت اُن کے خلاف کارروائی کا حق رکھتی ہے۔

معاون خصوصی اطلاعات نے مزید کہا کہ اپوزیشن جتنا مرضی زور لگا لے وہ حکومت کو گرا نہیں سکے گی، فردوس عاشق اعوان کا کہنا تھا کہ پی ڈی ایم میں اتحاد کا فقدان ہے اس لیے جلد ہی تمام سیاسی جماعتیں ایک دوسرے سے راہیں جدا کر لیں گی۔ انہوں نے مریم نواز اور مولانا فضل الرحمان پر بھی خوب تنقید کی۔

خیال رہے کہ منی لانڈرنگ اور آمدن سے زائد اثاثہ جات کیس میں شہباز شریف اور حمزہ شہباز کو احتساب عدالت پیش کیا گیا ہے ، عدالت میں شہباز شریف اور حمزہ شہباز نے روسٹرم پر حاضری مکمل کرائی۔


ای پیپر