وزیر اعظم اپنی ذمہ داریاں پوری نہیں کر پا رہے : بلاول بھٹو
11 May 2020 (23:19) 2020-05-11

اسلام آباد: پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نےکہا ہے کہ ملک میں جنگ کا وقت ہے تو ہمارا وزیراعظم موجود نہیں ، وزیراعظم کنفیوزڈ ہے اور جو انکی ذمہ داریاں ہیں وہ پوری نہیں کرپارہے ۔

قومی اسمبلی کے اجلاس میں خطاب کرتے ہوئے پی پی پی چیئرمین بلاول بھٹو نے ڈاکٹروں، پیرامیڈیکس اور نرسز کو خراج تحسین پیش کیا اورکہا کہ 11 ہیلتھ ورکرز شہید ہوئے ہیں اور اسپیکر اسد قیصر کی صحت یابی کے لیے بھی دعاگو ہیں۔ہم وفاقی حکومت کیساتھ ملکر کام کرنے کو تیار ہیں، ہم یہ کہتے کو تیار ہیں کہ ہمارا وزیراعظم عمران خان ہے کیونکہ ہم اس سے ایک طاقت بن سکتے ہیں،جب تک کورونا وائرس ہے اس وقت تک وزیراعظم کو اپنے بیٹنگ آرڈر پر غور کرنا چاہیے، ذمہ دار اور تجربہ کار لوگوں کو سامنے رکھیں جو ہمارے ساتھ بات کرسکتے ہیں اور تمیز سے بات کرسکتے ہیں،بنگلہ دیش، بھارت، نائیجیریا، افریقہ، ایتھوپیا اور افغانستان میں معاشی مشکلات نہیں ہیں ۔

انہوں نے کہا کہ  اگر وہ ممالک لاک ڈاؤن بھی کرسکتے ہیں، معیشت کوبھی سنبھال سکتے ہیں اور اپنے عوام کو ریلیف بھی دے سکتے ہیں تو پاکستان کیونکہ نہیں کرسکتا، ورلڈ بینک کے مطابق پاکستان، افغانستان اور مالدیپ تین ممالک جو کورونا کی وبا کی وجہ کساد بازاری کا شکار ہوسکتے ہیں،، پی ٹی آئی کی حکومت کورونا ریلیف آرڈیننس منظور نہیں کررہی ہے جو اسی وبا سے متاثر ہونے والے افراد کے لیے ہے لیکن سندھ میں ریلیف کو پی ٹی آئی سبوتاڑ کررہی ہے اور میں مطالبہ کرتا ہوں کہ گورنز سندھ آج ہی اس آرڈیننس کو منظور کریں،پیپلز پارٹی رہنماؤں اور وزیر اعلیٰ سندھ کو وفاقی حکومت کی اعلیٰ سطح سے گالم گلوچ کا نشانہ بنایا گیا، ان کی محنت اور کوششوں کی کردار کشی کی گئی۔


ای پیپر