British artist, sculpture, G7 leaders, electronic waste, Joe Biden, Boris Johnson
11 جون 2021 (11:14) 2021-06-11

لندن: برطانیہ میں ایک آرٹسٹ نے الیکٹرانک کچرے سے 'جی سیون' سربراہان کے مجسمے بنا ڈالے ۔

جسمہ سازوں کا کہنا ہے کہ مجسموں کی تیاری میں جو الیکٹرانک کچرا استعمال کیا گیا ہے ، اس کی خاص بات یہ ہے کہ اس کچرے کو دوبارہ استعمال کے قابل بنا کر ان سے روز مرہ زندگی میں کام لیا جا سکتا ہے ۔ ان سات مجسموں کی تیاری میں پرانے موبائل فون ، کمپیوٹر اور یہاں تک کہ ویکیوم کلینر بھی استعمال کیے گئے ہیں ۔ 

خیال رہے کہ جی سیون اجلاس کے ایجنڈے میں موسمیاتی تبدیلی اور ماحول دوست مستقبل کو ممکن بنانے پر غور شامل ہے اور اس فن پارے کا مقصد بھی الیکٹرانک کچرے سے ماحول کو لاحق خطرے کی طرف توجہ دلانا ہے ۔

دوسری جانب جی سیون اجلاس میں شرکت کے لیے برطانیہ پہنچنے والے امریکی صدر جوبائیڈن کی برطانوی وزیراعظم بورس جانسن سے ون آن ون ملاقات ہوئی ۔ ملاقات میں ماحولیاتی تبدیلیوں ، کورونا کی وبا کے باعث پیدا ہونے والی صورتحال اور دیگر باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال کیا گیا ۔

برطانیہ کے ساحلی قصبے 'کارن وال' میں ہونے والی ملاقات میں دونوں رہنماؤں نے امریکا اور برطانیہ کے درمیان بحر اوقیانوس کے چارٹر سے متعلق دستاویزات کا معائنہ کیا ۔

دونوں رہنماؤں کی خاتون اول نے بھی ساحل سمندر پر چہل قدمی کی اور خوشگوار انداز میں ساتھ وقت گزارا ۔


ای پیپر