حکومت ڈاکٹرز کو تحفظ فراہم کرنے میں ناکام رہی : ینگ ڈاکٹرز
11 دسمبر 2019 (18:43) 2019-12-11

لاہور: ینگ ڈاکٹرز ایسوسی ایشن کے پیٹرن ان چیف ڈاکٹر آصف نے کہا ہے کہ وکلا نے ہسپتال کے اندر داخل ہو کر نعرے لگائے جو ڈاکٹر نظر آئے اسے مارا جائے، وکلا کے ڈر سے ڈاکٹرز مجبورا اسپتال سے جان بچا کر بھاگے۔

ایک انٹرویو میں ڈاکٹر آصف نے کہا کہ وکلاء ڈیڑھ گھنٹے تک پی آئی سی میں موجود رہے کوئی پرسان حال نہیں، اس دوران آپریشن تھیٹر میں اندر سے تالے لگا کر 2 آپریشن جاری رہے۔ ڈاکٹرز اور پیرا میڈیکل اسٹاف پر اسپتال میں تشدد کیا گیا۔

ڈاکٹر آصف نے کہا کہ پولیس نے وکلا کو روکنے کی کوشش نہیں کی۔ وکلا ء کے خلاف ایف آئی آر درج کروائیں گے۔ حکومتی رٹ نظر نہیں آ رہی، وکلا ء نے اسپتال خالی کروا کر نعرے لگائے۔ حکومت ڈاکٹرز کو تحفظ فراہم کرنے میں ناکام رہی ہے۔


ای پیپر